نئے سرمایہ کاروں کے ساتھ حکومتی سرپرستی بھی ضروری ہے ‘ ماہ نور

نئے سرمایہ کاروں کے ساتھ حکومتی سرپرستی بھی ضروری ہے ‘ ماہ نور
نئے سرمایہ کاروں کے ساتھ حکومتی سرپرستی بھی ضروری ہے ‘ ماہ نور

  

لاہور ( این این آئی) اداکارہ ماہ نور نے کہا ہے کہ فلم انڈسٹری کی بحالی کے لئے نئے سرمایہ کاروں کے ساتھ حکومتی سرپرستی بھی ضروری ہے ، جب تک سرکاری سطح پر فلم انڈسٹری کی سرپرستی نہیں کی جائے گی اس وقت تک انڈسٹری میں بحران برقرار رہے گا ۔ ’’ این این آئی‘‘ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت مختلف انڈسٹریز کی ترقی کے لئے کام کر رہی ہے مگر فلم انڈسٹری کو لاوارث اور یتیم چھوڑ دیا ہے ۔ ہماری فلمیں دنیا بھر میں ہماری ثقافت کی پہچان ہیں ، بدقسمتی سے پچھلی دو دہائیوں سے فلم انڈسٹری کی کشتی ڈوب رہی ہے اور حکومت نے اس جانب سے اپنی آنکھیں بند کر رکھی ہیں ۔ ماہ نور نے کہا کہ اب خالی باتوں سے کام نہیں چلے گا بلکہ حکومت کو اس حوالے سے خصوصی کمیٹی تشکیل دینی چاہیے جو فلم انڈسٹری کو صنعت کا درجہ دلا سکے ۔انہوں نے کہا کہ فلم رائٹرز کو بھی چاہیے کہ بالی وڈ کی طرح وہ بھی اپنی فلموں میں اپنی ثقافت کو اجاگر کریں اور خاص طور پر جس طرح بھارتی فلموں میں مندر اور پوجا کے منظر پیش کیے جاتے ہیں اسی طرح پاکستانی فلموں میں مسجد ، نماز اور دین کے بارے میں بتایا جائے اور دنیا بھر میں یہ پیغام دیا جائے کہ پاکستان ایک امن پسند ملک ہے ۔

مزید :

کلچر -