میڈیکل سائنس میں نئے رجحانات سے آگاہی ضروری ہے،پروفیسر ڈاکٹر اعجاز حسن

میڈیکل سائنس میں نئے رجحانات سے آگاہی ضروری ہے،پروفیسر ڈاکٹر اعجاز حسن

  

لاہور(جنرل رپورٹر)پوسٹ گریجوایٹ میڈیکل انسٹی ٹیوٹ کے سابق ڈین پروفیسر ڈاکٹر اعجاز احسن نے کہا ہے کہ ہمارا ملک چاروں موسموں ، زرخیز زمینوں اور بلا صلاحیت افراد کا وطن ہے ہمارے بچے اور نوجوان پوری دنیا میں اپنی لیاقت کا سکہ منوا رہے ہیں ضرورت اس امر کی ہے کہ شعبہ طب سے وابستہ افراد بھی اپنے فرائض کی نوعیت کو پہچانیں اور اس شعبے میں عالمی سطح پر رائج پروفیشنل رویوں کو اپنانے میں دیر نہ کریں کیونکہ میڈیکل سائنس میں تحقیق کی بنیاد پر جنم لینے والے نئے رجحانات کو وطن عزیز میں رائج کئے بغیر آئے روز پھیلنے والی نت نئی وباؤ ں سے چھٹکارا ممکن نہیں انہوں نے ان خیالات کا اظہار گزشتہ روز لاہور جنرل ہسپتال میں پانچویں سالانہ سائنٹیفک سمپوزیم کی افتتاحی تقریب سے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس سال سائنٹیفک سپموزیم کا عنوان ’’ شعبہ طب میں پیشہ وارانہ رویوں کی تبدیلی‘‘ رکھا گیا۔ سپموزیم کے پہلے سیشن سے پرنسپل پروفیسر انجم حبیب وہرہ ، پروفیسر سید اصغر نقی، پروفیسرآغاشبیر علی ، پروفیسر خالد محمود ، پروفیسر نذیر احمد ، پروفیسر نزہت خواجہ ، پروفیسر فرح شفیع ودیگر طبی ماہرین نے خطاب کیا ۔ پروفیسر اعجاز احسن نے کہا کہ حالیہ برسوں میں ڈینگی ، خسرہ اور دیگر بیماریوں کے خلاف جدوجہد میں پی جی ایم آئی و ایل جی ایچ کے کردار کو فراموش نہیں کیا جا سکتا جس کا کریڈٹ پرنسپل پروفیسر انجم حبیب وہرہ کو جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ہمارے لئے اللہ کی ایک ایسی عظیم نعمت ہے جس نے ہمیں سب کچھ دیا ہے قبل ازیں افتتاحی سیشن سے خطاب کرتے ہوئے پروفیسر انجم حبیب وہرہ نے کہا کہ پی جی ایم آئی کے زیر اہتمام ہر سال فروری میں سائنٹیفک سمپوزیم کا انعقاد ایک مستقل روایت بن چکی ہے ۔ ہم اپنے ادارے کو میڈیکل سیمینار ، ورکشاپ اور سمپوزیم کے زیادہ سے زیادہ انعقاد کے ذریعے میڈیکل کے شعبے میں سٹیٹ آف دی آرٹ علاج گاہ میں تبدیل کر دیں گے ۔ انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ وژن 2020ء کی روشنی میں فیکلٹی ممبران ، انتظامی ڈاکٹرز اور ملازمین کے تعاون سے پی جی ایم آئی ، امیر الدین میڈیکل کالج، نرسنگ سکول ، لاہور جنرل ہسپتال اور سکول آف الائیڈ سائنسز ملک کے بہترین اداروں میں تبدیل کر دیا جائے گا ۔نامور طبی ماہرین ہر سیشن میں ڈاکومینٹریز، لیکچراور مقالہ جات کے ذریعے اپنے تجربات بیان کر رہے ہیں ۔ سائنٹیفک سمپوزیم آج جمعرات کو اختتام پذیر ہو گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -