قومی ایکشن پلان کے بعد دہشتگرد بوکھلاہٹ کا شکار ہیں،سمیع اللہ خان

قومی ایکشن پلان کے بعد دہشتگرد بوکھلاہٹ کا شکار ہیں،سمیع اللہ خان

  

لاہور(پ ر) مسلم لیگ (ن) کے ممتازرہنما،سابق ایم پی اے اوروزیراعلیٰ پنجاب کے معاون خصوصی سمیع اللہ خان نے کہا ہے کہ قومی ایکشن پلان پرمثبت پیشرفت کے نتیجہ میں دہشت گردوں پر بوکھلاہٹ اور جھنجھلاہٹ طاری ہے کچھ قوتیں پاکستان اورچین کی گہری دوستی سے خاصی پریشان ہیں اوراس دوستی کے خوف سے پاکستان کو دہشت گردی کا نشانہ بنایاجارہا ہے مگر ان ہتھکنڈوں سے اس تاریخی دوستی میں دراڑ آئی اورنہ آئے گی۔

۔پاکستان اورچین ایک دوسرے کاہاتھ تھام کر اپنے اپنے روشن مستقبل کی طرف گامزن ہیں۔پاکستان اورچین کے جوائنٹوینچر سے دونوں ملکوں میں نیا دورشروع ہوگااورترقی کے ثمرات سے عوام مستفیدہوں گے۔اپنے ایک بیان میں سمیع اللہ خان نے مزید کہا کہ ہمارامقابلہ بزدل مگرشرپسند عناصر کے ساتھ ہے جوچھپ کروارکرتے اورمعصوم بچوں کوبھی نشانہ بناتے ہیں۔پاکستان میں ہونیوالی دہشت گردی کے پیچھے جوخفیہ \'\'کردار\'\' کارفرماہیں وہ بھی عنقریب بے نقاب اورانصاف کے کٹہرے میں کھڑے ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ لاہورمیں پولیس لائنز پرخودکش حملے کے نتیجہ میں شہادتوں سے ہماری سکیورٹی فورسزکامورال مزید بلندہوگا ۔ دشمن ہمارے حوصلے اورصادق جذبوں کوپست نہیں کرسکتا ،آپریشن ضرب عضب میں امن اورانسانیت کے دشمنوں کو ضرورشکست ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کی منتخب اوروداعی قیادت کوقومی ایشوزپرپوری طرح متفق ،متحداورمتحرک دیکھ کردشمن بزدلی اوربددلی پراترآیا ۔مساجد،مدارس اورامام بارگاہ میں خودکش حملے کرنیوالے درندوں کاکوئی مذہب نہیں ہوسکتا ۔انہوں نے کہا کہ انسانیت کے درجے سے گرے ہوئے مٹھی بھرگمراہ لوگوں کو بیگناہ انسانوں کے خون سے ہولی کھیلنے کامزاآتا ہے ۔پاکستان کی سکیورٹی فورسز کی پیشہ ورانہ قابلیت اوردفاعی صلاحیت کوانڈراسٹیمیٹ کرنیوالے عناصرغلطی پر ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کی نڈرعوام اورسکیورٹی فورسزنے کندھے کے ساتھ کندھاجوڑلیا ہے ،پاکستان میں امن وآشتی اورتعمیروترقی اوربیرونی سرمایہ کاری کاراستہ نہیں روکا جاسکتا ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -