رواں مالی سال کے دوران غیر ملکی سرمایہ کاری ایک ارب 68 کروڑ ڈالر رہی

رواں مالی سال کے دوران غیر ملکی سرمایہ کاری ایک ارب 68 کروڑ ڈالر رہی

  

 کراچی(این این آئی)رواں مالی سال کے پہلے سات ماہ کے دوران غیر ملکی نجی اور سرکاری شعبے کی طرف سے پاکستان کی اسٹاک مارکیٹ، حکومتی بانڈز اور دوسرے شعبوں میں مجموعی طور پر ایک ارب 68 کروڑ 85 لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری کی گئی جو گزشتہ مالی سال کے اس عرصے کی سرمایہ کاری سے 155فیصد زیادہ ہے گزشتہ مالی سال جولائی سے جنوری تک مجموعی طور پر 66 کروڑ 23 لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری کی گئی تھی،تاہم رواں سال غیر ملکی سرمایہ کاری میں اتنا زیادہ اضافہ بنیادی طور پر دسمبر میں ایک ارب ڈالر کے سکوک بانڈز کی فروخت کی وجہ سے ہواجبکہ اس دوران غیرملکی نجی شعبے کی طرف سے کی گئی صنعتی شعبے میں براہ راست سرمایہ کاری کا حقیقی حجم گزشتہ سال کے مقابلے میں 1.4 فیصد کم ہوگیا،اسٹیٹ بینک آفپاکستان کے مطابق رواں مالی سال کے پہلے سات ماہ کے دوران نجی شعبے کی مختلف صنعتی شعبوں میں براہ راست سرمایہ کاری کا حجم اگرچہ گزشتہ سال سے 34.7 فیصد زیادہ ایک ارب 65 کروڑ 28 لاکھ ڈالر رہاجبکہ ایک ارب 10کروڑ 74 لاکھ ڈالر کا انخلاء ہواجو گزشتہ سال سے 64.3 فیصد زیادہ ہے ، اس طرح سات ماہ میں غیر ملکی نجی شعبے کی سرمایہ کاری کا حقیقی حجم 54 کروڑ 54 لاکھ ڈالر رہا، گزشتہ مالی سال اس عرصے میں ایک ارب 22 کروڑ 72لاکھ ڈالر کی براہ راست سرمایہ کاری کی گئی تھی جبکہ 67کروڑ 40 لاکھ ڈالر کا انخلا ہوا تھا اور سرمایہ کاری کا حقیقی حجم 55 کروڑ 32 لاکھ ڈالر تھا،گزشتہ سال کے مقابلے میں 6 ماہ کے دوران مختلف سیکٹرز میں مجموعی طور پر 52 کروڑ 91 لاکھ ڈالر کی براہ راست سرمایہ کاری کی گئی جو گزشتہ سال اس عرصے میں ہونے والی براہ راست سرمایہ کاری سے 19 فیصد زیادہ ہے ، گزشتہ سال نجی شعبے کی براہ راست سرمایہ کاری کا حجم 44 کروڑ 51 لاکھ ڈالر تھا،رواں مالی سال جولائی سے جنوری تک اسٹاک مارکیٹ میں نجی شعبے کی طرف سے 16 کروڑ 92 لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری کی گئی   جبکہ گزشتہ سال اس عرصے میں پورٹ فولیو سرمایہ کاری کا حجم صرف4کروڑ 3 لاکھ ڈالر تھا،رواں مالی سال کے پہلے سات ماہ میں غیر ملکی سرکاری شعبے کی طرف سے حکومتی بانڈز اور سیکورٹیز میں 97 کروڑ 39 لاکھ ڈالر کی نئی سرمایہ کاری کی گئی ، گزشتہ مالی سال اس عرصے میں غیر ملکی سرکاری شعبے کی طرف سے صرف 6 کروڑ 88 لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری ہوئی تھی،رپورٹ کے مطابق جنوری کے دوران ملک میں مجموعی طور پر براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری حقیقی حجم صرف 3کروڑ 15 لاکھ ڈالر رہا جو گزشتہ مالی سال میں جنوری میں کی گئی سرمایہ کاری سے77 فیصد کم ہے گزشتہ سال جنوری میں غیر ملکیوں نے پاکستان میں 13 کروڑ 96 لاکھ ڈالر لگائے تھے ۔

مزید :

کامرس -