سعودی عرب کاسرکاری سکیم کا حج کوٹہ 60 اور پرائیویٹ 40فیصد رکھنے کی تجویز

سعودی عرب کاسرکاری سکیم کا حج کوٹہ 60 اور پرائیویٹ 40فیصد رکھنے کی تجویز

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)وزارت مذہبی امور حکومت پاکستان نے ہوپ اور موسسہ جنوب ایشیاء کے ساتھ طے پانے والے معاہدے کے بر عکس سعودی وزارت الحج کے سامنے حج2016ء کے لیے سرکاری سکیم کا حج کوٹہ 60فیصد اور پرائیویٹ حج سکیم کا حج کوٹہ40فیصد رکھنے کی تجویز رکھ دی ،حج2016ء کے لیے پاکستان اور سعودیہ کے درمیان ایم او یو سائن نہ ہو سکا جمعرات کے روز مکہ مکرمہ میں وفاقی وزیر مذہبی امور سردار محمد یوسف اور وزیر حج سعودیہ بندر بن حجاز کے درمیان ایم او یو سائن ہونے کے لیے میٹنگ شروع ہوئی تو وزارت مذہبی امور کی طرف سے60فیصد سرکاری اور40فیصد پرائیویٹ سکیم کے حساب سے ایگریمنٹ سعودی وزارت حج کے سامنے رکھ دیا گیا جس پر ہوپ کے نمائندوں سمیت موسسہ جنوب ایشیاء کے ذمہ داران حیران رہ گئے کیونکہ بدھ کی رات وفاقی وزیر مذہبی امور سردار محمد اور ہوپ کے چےئرمین ندیم شریف کی موجودگی میں وفود نے موسسہ جنوب ایشیاء کے لیے چےئرمین رافعت بدر سے طویل مذاکرات کیے اور حج2015ء کے معاہدے کو حج2016ء کے لیے جاری رکھنے پر اتفاق ہوا ،روزنامہ پاکستان کو معلوم ہوا ہے وزارت مذہبی امور حکومت پاکستان کی60اور40فیصد کوٹہ کی تقسیم کی تجویز کو مسترد کرنے کی بجائے کہا گیا ہے حج کوٹہ پاکستان کا ہے ان کی مرضی کا ہے جس طرح مرضی تقسیم کرے ،ہوپ کی طرف سے سخت موقف آنے کے بعد ایم او یو سائن نہیں ہو سکا دوبارہ میٹنگ تک ایم او یو سائن کرنے کا فیصلہ موخر کر دیا گیا ہے پاکستانی وفد آج مدینہ پہنچے گا پیر منگل کو دوبارہ میٹنگ ہو گی اورحج2016ء کا ایم او یو سائن ہو گا۔

مزید :

علاقائی -