لاہور ،دوماہ میں نوسر بازی کی 100وارداتیں ، 50ہلاکتیں ،پولیس قابو نہیں پا سکی

لاہور ،دوماہ میں نوسر بازی کی 100وارداتیں ، 50ہلاکتیں ،پولیس قابو نہیں پا سکی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور (خبر نگا ر ) صوبائی دارالحکومت میں دو ما ہ کے دورا ن نوسر بازی کی 100سے زائد وارداتیں اور 50 ہلاکتیں ہو گئیں ۔ریلوے اسٹیشن،مصری شاہ ،نیازی اڈا،سٹی اڈ،بادامی باغ ،لاری اڈا،مینار پاکستان،بند روڈ،بھاٹی گیٹ،داتا دربار،ااور پبلک پارکس نو سر بازوں کی آما جگا ہ بن گئے ۔ پولیس کسی ایک بھی واردات کا سراغ لگانے ، ملوث قاتلوں کو گرفتار کرنے اور نوسر بازی کے واقعات کو کنٹرول کرنے میں ناکام ہو گئی۔تفصیلات کے مطابق شہر میں ہونے والی نو سر بازی کی وارداتیں جہاں عوام کے لئے شدید پریشانی کا باعث ہیں وہا ں لاہور پولیس کی کارکردگی پر بھی ایک سوالیہ نشان ہے۔ نو سر باز چند روپوں کی خاطر کسی کی جان لینے سے بھی دریغ نہیں کرتے، زیادہ تربوڑھے مسافر ان کا شکار بنتے ہیں جن کا سامان اٹھانے اور ان کو گاڑی تک پہنچانے کا کہہ کر سامان لیکر رفو چکر ہو جاتے ہیں یا پھر ان کو زہریلا مشروب پلا کر ان کی جان لے لیتے ہیں۔نو سر بازی کے حوالے سے مردوں کے علاوہ جوان لڑکیا ں بھی پیچھے نہیں، سڑکو ں اور بس سٹاپوں پر موجود خو بصورت لڑکیا ں بھی اپنے حسن و جمال کے پھندے میں لوگوں کو پھنسا کر ان کو بلیک میل کرتی ہیں اور اور بیچارے لوگ ان کو اپنا سب کچھ دے کر بڑی مشکل سے اپنی جان چھڑاتے ہیں۔ اس کے علاوہ بھیک کی آڑ میں نو سر باز عورتیں سر عام لوگوں کو بدکاری کی دعوت دیتی ہیں اور شریف لوگوں کو بلیک میل کرتی یا غر بت کا بہانہ بنا کر جیبوں کو صاف کر جاتی ہیں ۔ پولیس اس معاملے میں یا تو برابر کا حصہ لے کر خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے یا پھر اپنے فرائض میں غفلت کی مر تکب ہو رہی ہے۔بادامی باغ ،لاری اڈا،مینار پاکستان ،بند روڈ،بھاٹی گیٹ،داتا دربار،ریلوے اسٹیشن، مصری شاہ ،نیازی اڈا،سٹی اڈا ایسے علاقے ہیں جہاں پر آئے دن کوئی نہ کوئی شخص نوسر بازوں کا شکار ہوکر اپنی زندگی کی بازی ہار جاتا ہے اور پولیس معمول کی طرح مقدمہ درج کرکے اس کے لواحقین کو تسلی دے دیتی ہے بعد میں اس مقدمے کی فائل کو سر د خانے میں ڈال دیا جاتاہے ۔دوما ہ کے دورا ن نوسر بازی کی 100 سے زائد وارداتیں اور 50 ہلاکتیں کیپٹل سٹی پولیس کیلئے بڑا چیلنج بن گئیں ۔ اس حوالے سے پو لیس کا کہنا ہے کہ متعد د افرا د کی شنا خت نہیں ہو ئی جبکہ چند ایک کے ملزم بھی پو لیس نے حرا ست میں لئے ہیں ۔

مزید :

علاقائی -