مہمند ایجنسی ،خاصہ دار چیک پورسٹ اور سولر ٹیوب ویل پر دہشتگردوں کا حملہ ،9اہلکار شہید

مہمند ایجنسی ،خاصہ دار چیک پورسٹ اور سولر ٹیوب ویل پر دہشتگردوں کا حملہ ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

مہمند ایجنسی (نمائندہ پاکستان ) مہمند ایجنسی، لوئر مہمند میں رات کی تاریکی میں 2 حملوں کے دوران 9 خاصہ دار اہلکارشہید۔ تحصیل یکہ غنڈ میں مسلح افراد نے سولر ٹیوب ویل کی ڈیوٹی پر مامور 2 اہلکاروں کو نشانہ بنایا۔ آدھی رات کو تحصیل پنڈیالئی کے حدود کڑپہ میں خاصہ دار پوسٹ پر حملے میں 7 خاصہ دار شہید کر دیے گئے۔ جماعت الاحرار نے ذمہ داری قبول کر لی۔ ایجنسی میں سیکورٹی ہائی الرٹ، نماز جنازہ ہیڈ کوارٹر غلنئی میں ادا ، سلامی دی گئی، حکام کی شرکت۔ سیکورٹی فورسز نے علاقے میں سرچ آپریشن شروع کر دیا۔ مہمند ایجنسی میں سرکاری ذرائع کے مطابق لوئر مہمند میں بدھ اور جمعرات کے درمیانی رات 2 دہشت گرد حملوں میں 9 خاصہ دار اہلکار شہید ہو گئے ہیں۔ پہلا واقعہ تحصیل یکہ غنڈ میچنئی کے علاقہ دروازگئی میں سرکاری شمسی ٹیوب ویل کی حفاظت پر مامور 2 خاصہ دار اہلکار بلال خان اور تاج علی پر نامعلوم حملہ آوروں نے اندھا دھند فائرنگ کی جس سے دونوں موقع پر دم توڑ گئے۔ جبکہ آدھی رات کے بعدایک اور واقعہ میں عسکریت پسندوں نے تحصیل پنڈیالئی کے حدود کڑپہ پہاڑیوں میں قائم خاصہ دار فورس کے لاٹری پوسٹ پر مسلح افراد نے اچانک حملہ کر کے ڈیوٹی پر مامور 7 خاصہ دار ملتانے ولد زرین، نصیر خان ولد مومن سید، فرہاد ولد شوکت، بن یامین ولد محمد خان، ذاکر ولد زرے خان، انور خان ولد احمد خان اور راد خان ولد لعل میاں الدین کو فائرنگ کر کے شہید کر دیا۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ایجنسی میں سیکورٹی ہائی الرٹ کر کے فورسز نے سرچ آپریشن شروع کر دیا ۔ دوسری طرف ٹی ٹی پی جماعت الاحرار کے ترجمان احسان اللہ احسان نے ذرائع ابلاغ کو جاری کر دہ بیان میں حملوں کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔ شہید خاصہ دار اہلکاروں کی نماز جنازہ سرکاری اعزاز کے ساتھ ایجنسی کے ہیڈ کوارٹر غلنئی لیوی کیمپ میں ادا کر دی گئی۔ جس میں مہمند ایجنسی کے پولیٹیکل ایجنٹ محمود اسلم اور دیگر سرکاری حکام نے شرکت کی۔ جنازہ ادا کرنے کے بعد خاصہ دار لیوی فورس کے چاق و چوبند دستے اور پی اے مہمند نے سلامی دی۔ جس کے بعد کفن دفن کے معاوضے کے ساتھ جاں بحق خاصہ دار اہلکاروں کی لاشیں آبائی علاقوں کو پہنچا دی گئیں ۔واقعات کے بعد سیکورٹی فورسز، پولیٹیکل انتظامیہ اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے دروازگئی میچنئی سے عقرب ڈاگ تک اور متنازعہ دیہات میں پولیس کے ساتھ مل کر گھر گھر سرچ آپریشن شروع کر دیا اور 6 مشکوک افراد گرفتار کرلئے ہیں۔ جبکہ مہمند ایجنسی کے چیک پوسٹوں اور فورسز پوسٹوں کو الرٹ کر کے عوام کی حفاظت کے خاطر چھان بین اور چیکنگ سخت کر دی گئی ہے۔ اور سیکورٹی فورسز کا مختلف علاقوں میں سرچ آپریشن جاری ہے۔

مزید :

صفحہ اول -