ہائی کورٹ بار کے انتخابات بائیو میٹرک سسٹم کے تحت ہوں گے ،4300وکلاءحق رائے دہی سے محروم

ہائی کورٹ بار کے انتخابات بائیو میٹرک سسٹم کے تحت ہوں گے ،4300وکلاءحق رائے دہی ...
ہائی کورٹ بار کے انتخابات بائیو میٹرک سسٹم کے تحت ہوں گے ،4300وکلاءحق رائے دہی سے محروم

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہور ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن کے 27فروری کو ہونے والے انتخابات بائیو میٹرک سسٹم کے تحت کروائے جائیں گے تاہم بار کے عہدیداروں کی دوسالہ کوششوں کے باوجود 4300سے زائد وکلاءاپنی عدم دلچسپی کے باعث بائیومیٹرک سسٹم کے تحت رجسٹرڈنہ ہوسکے۔چیئرمین الیکشن بورڈ کہتے ہیں کہ بائیومیٹرک سسٹم کے تحت رجسٹرڈنہ ہونے والے وکلاووٹ کاحق استعمال نہیں کرسکیں گے۔لاہور ہائیکورٹ بار کے کراچی شہداءہال میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے چیئرمین الیکشن بورڈ شہزاد شوکت نے کہا کہ بار کے رجسٹرڈ ووٹرز کی مجموعی تعداد 21ہزار 414ہے جس میں سے 11ہزار 469 وکلاءکو بائیو میٹرک سسٹم کے تحت رجسٹر کر لیا گیا ہے، تاہم ابھی بھی چھ46 فیصد وکلاءکی رجسٹریشن باقی ہے جس میں سے 4300 وکلاءکا تعلق لاہور سے ہے۔ شہزادشوکت کاکہناہے کہ بدقسمتی سے لاہور کے وکلاءنے بائیو میٹرک سسٹم کے تحت رجسٹرڈ ہونے میں دلچسپی نہیں لی۔ انہوں نے کہا کہ رواں سال ہائیکورٹ بار کے انتخابات مکمل طور پر بائیو میٹرک سسٹم کے تحت کرائے جائیں گے۔انہوں نے بتایاکہ بائیو میٹرک سسٹم کے تحت مزید وکلاءکی رجسٹریشن کے لئے چار ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں۔چیئرمین الیکشن بورڈنے مزید کہا کہ الیکشن کے لئے ضابطہ اخلاق جاری کر دیا گیا ہے جس کے تحت امیدواروں کی جانب سے کھانا کھلانے، بڑی فلیکسز اور بینرز لگانے پر مکمل طور پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

مزید :

لاہور -