بھارت نے پاکستان کے تین ریسلرز اور ایک آفیشل کو ویزہ جاری کر دیا، 20 فروری کو نئی دہلی روانہ ہوں گے

بھارت نے پاکستان کے تین ریسلرز اور ایک آفیشل کو ویزہ جاری کر دیا، 20 فروری کو ...
بھارت نے پاکستان کے تین ریسلرز اور ایک آفیشل کو ویزہ جاری کر دیا، 20 فروری کو نئی دہلی روانہ ہوں گے

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کے تین ریسلرز اور ایک آفیشل 20 فروری کو واہگہ بارڈر کے راستے بھارتی شہر نئی دہلی روانہ ہوں گے جہاں ایشین ریسلنگ چیمپین شپ کے فری سٹائل ایونٹ میں پاکستانی ٹیم حصہ لے گی۔

تفصیلات کے مطابق ایشین ریسلنگ چیمپئن شپ کا فری سٹائل ایونٹ نئی دہلی میں 21 فروری سے شروع ہو گا، محمد بلال 57 کلوگرام، طیب رضا 97 اور زمان انور 125 کلوگرام میں پاکستان کی نمائندگی کریں گے جبکہ سہیل رشید کوچ کی حیثیت سے بھارت جائیں گے۔پاکستانی ریسلنگ ٹیم کی ویزا درخواست کو بھارتی ہائی کمیشن نے پہلے جمع کرنے سے انکار کردیا تھا جس پر پاکستان ریسلنگ فیدڑیشن نے ریسلنگ کی عالمی باڈی سے رابطہ کرکے تمام صورت حال سے آگاہ کردیا تھا تاہم یونائٹیڈ ورلڈ ریسلنگ کی مداخلت پر اب یہ ویزے دئیے گئے ہیں۔

ایشین ریسلنگ چیمپئن شپ میں ایران، جاپان، کوریا، قازقستان، ازبکستان کی ٹیمیں بھی شریک ہیں۔ انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کی جانب سے واضح کیا گیا ہے کہ کسی بھی ایونٹ کا میزبان ملک شریک ٹیموں کو ویزے جاری نہیں کرتا، تو پھر اس ملک کو ایونٹ کی میزبانی سے محرومی کے ساتھ جرمانہ بھی کیا جاسکتا ہے۔

ریسلنگ فیڈریشن کے سیکرٹری ارشد ستار نے ویزے جاری ہونے پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایشین چیمپئن شپ میں پاکستانی ریسلرز کی شرکت اس لئے بھی ضروری ہے کہ اب وہ مارچ میں ہونے والے اولمپکس کوالیفائنگ راو¿نڈ میں بھی حصہ لینے کے اہل ہوجائیں گے کیونکہ 2017ءمیں بھارتی ویزے جاری نہ ہونے کی وجہ سے پاکستان ایشین ریسلنگ چیمپئن شپ میں شریک نہیں ہوسکا تھا۔

مزید : کھیل