بھارت کیساتھ تصادم میں چارچینی فوجیوں کی ہلاکت کی تصدیق لیکن انڈیا کے دراصل کتنے فوجی مارے گئے؟ تفصیلات منظرعام پر

بھارت کیساتھ تصادم میں چارچینی فوجیوں کی ہلاکت کی تصدیق لیکن انڈیا کے دراصل ...
بھارت کیساتھ تصادم میں چارچینی فوجیوں کی ہلاکت کی تصدیق لیکن انڈیا کے دراصل کتنے فوجی مارے گئے؟ تفصیلات منظرعام پر

  

بیجنگ(ڈیلی پاکستان آن لائن) چین نے انکشاف کیا ہے کہ گزشتہ سال بھارت کے ساتھ سرحد پر لڑائی کے دوران ان کے چارفوجی ہلاک اور ایک شدید زخمی ہوگیا تھا،  پیپلزلبریشن آرمی ( پی ایل اے) اور بھارتی فوج کے درمیان گزشتہ سال وادی گلوان میں لڑائی ہوئی تھی جس کی تفصیلات سامنے آگئی ہیں اور پانچوں چینی فوجیوں کو اعزازات سے نوازاگیا۔

پی ایل اے اخبار کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ سنٹرل ملٹری کمیشن نے پانچوں فوجیوں کو بارڈر کی حفاظت کرنیوالے ہیرو قراردیا ہے۔ 

پی ایل اے ژنجیانگ ملٹری کمانڈ سے واقعے میں زخمی ہونیوالے ریجمنٹل کمانڈر قی فباﺅ کو ہیروکا ایوارڈ دیاگیا، بٹالین کمانڈر چین ہونگجن کو بھی ان کی موت کے بعد اس اعزاز سے نوازاگیا۔مارے گئے چین ژیانگرونگ ، ژیاہوسیوئیان اور وانگ زہوران کو بھی اعلیٰ درجے کے ایوارڈز سے نوازاگیا۔ چین کے ریاستی میڈیا نے بتایا کہ یہ لوگ چین کی سرحد عبور کرنیوالے غیرملکی دستوں سے لڑتے ہوئے مارے گئے ۔ 

ڈیلی پاکستان گلوبل کے مطابق متنازعہ علاقے میں 45سالوں کے دوران پہلی مرتبہ پرتشدد لڑائی کے دوران کم ازکم 20بھارتی فوجی بھی مارے گئے ، اطلاعات کے مطابق دونوں اطراف سے فوجیوں نے ایک دوسرے پر پتھراﺅ کیا اور کیل لگے ہوئے ڈنڈوں سے مارا پیٹا تھا۔ 

مزید :

بین الاقوامی -