سی پی این ای کی ایکسپریس گروپ کو نشانہ بنائے جانے کی شدید مذمت

سی پی این ای کی ایکسپریس گروپ کو نشانہ بنائے جانے کی شدید مذمت

کراچی (اسٹاف رپورٹر) کونسل آف پاکستان نیوز پیپر ایڈیٹرز (سی پی این ای ) کے صدر مجیب الرحمان شامی اور سیکریٹری جنرل ڈاکٹر جبار خٹک نے ایکسپریس گروپ کے تین کارکنوں کی شہادت پر انتہائی رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے دہشتگردی کے اس انتہائی شرمناک واقعے کی شدیدمذمت کرتے ہوئے ایکسپریس گروپ کے ساتھ مکمل اظہار یکجہتی کیا ہے ۔سی پی این ای کے رہنماوں کی جانب سے یہاں جاری کئے جانے والے ایک بیان میں اس امر پر غم و غصہ کا اظہار کیا گیاہے کہ گزشتہ چھ ماہ کے دوران ایکسپریس گروپ کوتین بار دہشتگردی کا نشانہ بنائے جانے کے باوجود ان واقعات میں ملوث افراد کو گرفتار نہیں کیا جاسکا جس کی وجہ سے سے میڈیا سے وابستہ افراد کو نشانہ بنانے کے واقعات میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے یہ ریاستی اداروں کی ناکامی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ گزشتہ چند سالوں سے ملک میں دہشتگردی کی جاری لہر کے دوران میڈیا سے وابستہ افراد کی ہلاکتوں کی تعداد ایک سو کے قریب جاپہنچی ہے اور قاتل آج بھی آزادانہ طور پر گھوم رہے ہیں ۔بیان میں اس عزم کا اعادہ کیا گیا ہے کہ دہشتگردوں اور انتہا پسند عناصر کی طرف سے میڈیا کی آواز کو دبانے کی ہر مذموم کاروائی کی مزاحمت کی جائے گی اور ان کے قلم کی حرمت پر ہرگز آنچ نہ آسکے گی صحافت کے پیشہ کے لئے دنیا کا تیسرا خطرناک ملک قرار دئے جانے کے باوجو پاکستانی دمیڈیا سے وابستہ افراد کے حوصلے بلند ہیں اس لئے کسی بھی مذموم کاروائی کو خاطر میں لائے بغیر پاکستانی میڈیا اپنا مشن جاری رکھے گا۔دریں اثنا سی پی این ای کے سینئر نائب صدر الیاس شاکر کی زیر صدارت میں آج یہاں کونسل کے دفتر میں منعقد ہونے والے ایک ہنگامی اجلاس میں ایکسپریس نیوز چینل کے تین کارکنوں کی دہشتگردی کے ایک واقع میں ہلاکت کی شدید مذمت کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ ایکسپریس گروپ کے دفاتر پر حملوں اور اس کے کارکنوں کو شہید کرنے کے واقعات میں ملوث افراد کو فوری طور پر گرفتار کرکے قرار واقعی سزا دلوائی جانے اور صحافیوں و میڈیا ہاوسز کی مناسب سیکورٹی فراہمی کو یقینی بنایا جائے تاکہ مستقبل میں اس قسم کے نا خوشگوار واقعات کو روکا جاسکے۔

مزید : صفحہ آخر