غربِ اردن میں اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے ایک اور فلسطینی شہید

غربِ اردن میں اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے ایک اور فلسطینی شہید

مقبوضہ بیت المقدس(این این آئی)اسرائیلی فورسز نے مقبوضہ مغربی کنارے کے شہر طولکرم کے نزدیک ایک فلسطینی کو گولی مار کر شہید کردیا ہے،ادھر اسرائیلی فوج نے دعویٰ کیا ہے کہ ااس فلسطینی نے ایک فوجی کو چاقو گھونپنے کی کوشش کی تھی لیکن اس واقعے میں کوئی اسرائیلی زخمی نہیں ہوا ۔میڈیارپورٹس کے مطابق اسرائیلی فوج نے ایک بیان میں کہا کہ چند لمحے قبل طولکرم سے متصل ایک گذرگاہ پر چاقو سے مسلح ایک حملہ آور نے ایک اسرائیلی فوجی پر حملے کی کوشش کی تھی۔بیان کے مطابق اسرائیلی فورسز نے اس ناگزیر خطرے کا جواب دیتے ہوئے حملہ آور کی جانب فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں اس کی موت واقع ہوگئی ہے۔

اسرائیلی فوجیوں نے سوموار کے روز بھی مقبوضہ مغربی کنارے میں واقع شہر بیت لحم کے نزدیک ایک فلسطینی کو گولی مار کر شہید کردیا تھا۔اکتوبر 2015ء سے اب تک اسرائیلی فورسز کی مقبوضہ بیت المقدس ، غرب اردن اور غزہ کی پٹی میں سفاکانہ کریک ڈاؤن کارروائیوں، فائرنگ اور حملوں میں 250 فلسطینی شہید ہوچکے ہیں۔ان میں سے 150 کے بارے میں اسرائیلی فوج نے دعویٰ کیا ہے کہ وہ مبینہ طور پر حملہ آور تھے۔اس عرصے کے دوران میں فلسطینیوں کے مبینہ چاقو حملوں ،فائرنگ یا اپنی گاڑیوں کو راہ گیروں پر چڑھانے کے واقعات میں 40 اسرائیلی ، دو امریکی ،ایک اردنی،ایک سوڈانی اور ایک ایریٹرین شہری ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے ہیں۔

مزید : عالمی منظر