ایاز صادق ، رضاربانی خورشید شاہ ، اعتزاز اور فضل الرحمن کے اکاؤنٹس میں کروڑوں روپے کی جعلی ٹرانزیکشن ، ایف آئی اے نے انکوئری شروع کردی

ایاز صادق ، رضاربانی خورشید شاہ ، اعتزاز اور فضل الرحمن کے اکاؤنٹس میں ...

 اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)سپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق، چیئرمین سینیٹ رضا ربانی اور اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ کے بینک اکاؤنٹس میں کروڑوں روپے کی جعلی ٹرانزیکشن کا انکشاف ہواہے۔تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف خورشید شاہ کے نام پر 10 کروڑ روپے کے فکسڈ ڈیپازٹ کی بینک رسید اپوزیشن چیمبر کو موصول ہوئی تو چیمبر آنے پر سٹاف نے ایس ایم ای بینک کا ٹی ڈی آر خورشید شاہ کے سامنے رکھا۔ خورشید شاہ اپنے اکاؤنٹس میں 10 کروڑ روپے جمع ہونے کا جان کر پریشان ہو گئے اور ایسی کسی ٹرانزیکشن سے لاعلمی کا اظہار کرتے ہوئے اپنے سٹاف کو فوراً متعلقہ بینک سے رابطہ کرنے کی ہدایت کی،موصول شدہ ٹی ڈی آر پر بجھوانے والے کا نام برکت لاشاری، چیف منیجر مین برانچ سائٹ کراچی اور فون نمبر بھی درج ہے۔جبکہ سپیکر ایاز صادق اور چیئرمین سینیٹ کے اکاؤنٹس میں بھی جعلی ٹرانزیکشن کا انکشاف ہوا،چیئرمین سینیٹ نے ایوان بالا کو بتایا کہ انہیں سرکاری بینک میں دس کروڑ روپے جمع کرائے جانے کی بینک رسید ملی ہے۔ اس بینک میں ان کا کوئی اکاؤنٹ نہیں دوسری طرف ایاز صادق نے گورنر سٹیٹ بینک کو خط لکھ دیاہے۔گورنر سٹیٹ بینک نے سپیکر آفس کو جعلی ٹرانزیکشن سے مطلع کر دیاہے۔سپیکر ایاز صادق نے معاملے کی فوری طور پر تحقیقات کرنے اور اس کے بارے میں آگاہ کرنے کا کہاہے۔دوسری جانب ایف آئی اے کو بھی تحقیقات کرنے کا حکم جاری کر دیا گیاہے۔دریں اثنا ایسی ہی کچھ جعلی ٹرانزیکشنز کی رسیدیں اعتزاز احسن اور مولانا فضل الرحمن کو بھی موصول ہوئی ہیں۔

جعلی ٹرانزیکشن

مزید : صفحہ اول