پارک لین فلیٹوں کی خبر کو غلط انداز میں چلانے والے رپورٹر کے خلاف تحقیقات شروع

پارک لین فلیٹوں کی خبر کو غلط انداز میں چلانے والے رپورٹر کے خلاف تحقیقات ...
پارک لین فلیٹوں کی خبر کو غلط انداز میں چلانے والے رپورٹر کے خلاف تحقیقات شروع

  

اسلام آباد (اے پی پی)بی بی سی انتظامیہ نے اپنے پلیٹ فارم سے پارک لین فلیٹوں کی خبر کو غلط انداز میں چلانے والے رپورٹر کے خلاف تحقیقات شروع کر دیں۔پی ٹی آئی نے ایک پرانی خبر کو نئی خبر کے طور پیش کرنے کیلئے اطہر کاظمی کے ذریعے بی بی سی کو نقصان پہنچایا، رپورٹر اطہر کاظمی پاکستان کی ایک سیاسی جماعت کے ہاتھوں کا کھلونا بنے ، انہیں جہانگیر ترین کے انٹرویو کی اجازت بھی نہیں دی گئی تھی.

حکومت پاکستان کی بھی 2آف شور کمپنیوں کا انکشاف

جہانگیر ترین نے رپورٹر سے کہا تھا کہ وہ بی بی سی کی ویب سائٹ پر کوئی ایسی چیز چلائے ، جس کا غلط طور استعمال ہو سکے ،یہ وہی رپورٹر ہے جو ایک اور چینل پر کام کرتے ہوئے پارلیمنٹ کے باہر عمران خان کے بھتیجے حسن نیازی کے ہمراہ فضل الرحمان پر حملے میں بھی ملوث تھا، انتہائی معتبر ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ رپورٹر اطہر کاظمی پر بی بی سی کی انتظامیہ کا الزام ہے کہ وہ ایک پرانی خبر کو نئی خبر کے طور اپ لوڈ کر کے پاکستان کی ایک سیاسی جماعت کے ہاتھوں میں کھیل رہے ہیں۔

عمران خان پاناما سے متعلق خبر کو نیا بنا کر پیش کر رہے ہیں حالانکہ مسلم لیگ (ن) اور آزاد مبصرین اسے مسترد کر چکے ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ بی بی سی کو ایک بڑی مشکل صورتحال میں ڈال دیا گیا ہے ، خبر میں کوئی نئی بات نہیں۔

مزید : اسلام آباد