نواز شریف خود کو بچانے کے لئے اولاد کو آگے کر رہے ،مطالبات پورے ہونے تک تحریک چلے گی،شوبازیاں کرنے والے نہیں:بلاول بھٹو

نواز شریف خود کو بچانے کے لئے اولاد کو آگے کر رہے ،مطالبات پورے ہونے تک تحریک ...
نواز شریف خود کو بچانے کے لئے اولاد کو آگے کر رہے ،مطالبات پورے ہونے تک تحریک چلے گی،شوبازیاں کرنے والے نہیں:بلاول بھٹو

  

فیصل آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئر مین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ ہم نے تحریک کا آغاز کردیا ہے، جب تک 4مطالبات پورے نہیں ہوں گے ہماری تحریک جاری رہے گی،ملک میں حقیقی خوشحالی اور انصاف تک تحریک نہیں رکے گی۔وزیر اعظم نواز شریف اپنا مال بچانے کے لئے اپنی اولاد کو آگے کر رہے ہیں، انہوں نے ہمیں قید میں رکھا اور خود سرمایہ بیرون ملک بھجواتے رہے۔

وزیراعظم محمد نواز شریف کی غیرملکی سرمایہ کاروں کو پاکستان میں خصوصی اقتصادی زون بنانے کی پیشکش

تفصیلات کے مطابق فیصل آباد میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ نواز شریف ہمارے خلاف مقدمات اور اپنے لیے آف شور کمپنیاں بناتے رہے ہیں، اب ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے۔ذاتی تعلقات والی خارجہ پالیسی نہیں چل سکتی،ہمارا مطالبہ تھا کہ واضح اور حقیقی خارجہ پالیسی بنائی جائے۔ ہم نے کئی بار کہا کہ سی پیک کو متنازعہ نہ بنایا جائے،پاکستان کو عالمی سطح پر بڑے چیلنجز کا سامنا ہے۔احتساب سے متعلق پیپلز پارٹی کا بل منظور کیا جائے،آبی جارہیت کے زریعے پاکستان کو تنہا کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔سربراہ تحریک انصاف پر تنقید کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ جولوگ صرف شو بازیاں کرتے ہیں ان کی صرف آنیاں جانیاں ہوتی ہیں،یہ خودکو پاکستان کا وزیر اعظم بنانے کا خواب دیکھ رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آج میں جس شہر میں آیا ہوں یہ پاکستان کا انڈسٹریل حب کہلاتا تھا ،آج فیصل آباد میں انڈسٹری بند پڑی ہے۔یہاں کی ملیں چلتی تھیں تو لوگوں کو روز گار ملتا تھا لیکن آج یہ ملیں بند پڑی ہیں، میاں صاحب آپ کس ترقی کی بات کر رہے ہیں؟ آپ میں اور ہم میں یہی فرق ہے،آج آپ کی ترقی کا مذاق بن رہا ہے۔کسان خود کشیاں کرنے پر مجبور ہیں،وہ اپنی فصلیں جلا رہے ہیں۔ میاں صاحب آپ روز ہمیں ترقی کی داستانیں سناتے ہیں،صحت اور تعلیم کا نظام، بھی فیل ہو چکا ہے۔دانش سکول بھی فیل ہوگئے اورآشیانہ سکیم بھی نہ چل سکی،پنجاب کو فیل منصوبے دینے والے کا دماغ بھی فیل ہو چکا ہے۔بلاول بھٹوکا کہنا تھا کہ میں کسانوں کو ان کی فصل کی قیمت دلانے نکلا ہوں ،میں نکلا ہوں لوگوں کے حقوق اور عوام کی جنگ لڑنے کے لیے۔کب تک لوگوں کے معاشی قتل پر خاموش رہوں ، یہ حکومت قاتل ہے۔ مزدوروں، کسانوں ، نوجوانوں میرا ساتھ دو تاکہ ملک کے اندھیروں کو شکست دے سکیں۔تنخواہ میں اضافہ نہ ہونے سے ملازمین کا معاشی قتل ہوا ،صنعت تباہ ہنے سے مزدوروں کا معاشی قتل ہوا جبکہ ناکام سرکاری پالیسی سے زراعت کاشعبہ بھی تباہ ہوچکا ہے جس نے کسانوں کامعاشی قتل کیا۔ہم یہ لوٹ مار نہیں ہونے دیں گے۔

بھارت اور متحدہ عرب امارات انتہائی قریب آگئے، ایسا معاہدہ ہوگیا جس کی تاریخ میں مثال نہیں

بلاول بھٹو کا مزید کہنا تھا کہ نواز شریف نے سیمنٹ فیکٹری اپنے یاروں کودی،وہ آج پھرسارے ادارے ہڑپ کرناچاہتے ہیں،پاکستان کے عوام کو غریب بنا کراپنا کاروبار چمکا رہے ہیںجبکہ فنانس منسٹر کہتا ہے دال مہنگی ہے تو مرغی کھالو۔پاکستان میں نوجوانوں کو روزگار نہیں مل رہااورشریفوں کی ملوں میں ترقی ہو رہی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ پاناما اکاونٹس میں ترقی ہورہی ہے اور کسان کو فصل کی قیمت بھی نہیں مل رہی۔ نواز شریف پر تنقید کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ میاں صاحب آپ نے پرائیویٹائزیشن کے نام پر ملک پرظلم کیا ،، آپ نے خود کہا تھا کشکول توڑ دیں گے، ایکسپورٹ 100 ارب ڈالر تک لے جائیں گے لیکن ایکسپورٹ کم ہوگئی۔جو ٹیکس امیروں پر ہونا چا ہیے وہ غریبوں سے وصول کیا جارہا ہے ، آج عالمی منڈی میں تیل سستا اور ملک میں بجلی مہنگی ہے ۔بجلی کا یونٹ ہماری حکومت میں 8 روپے کا تھا جبکہ نواز شریف کی حکومت میں آج 16 روپے ہو گیا ہے۔ بلاول بھٹو نے کہا کہ اگر پاکستان کی معیشت کو بچانا ہے تو ان شریفوںیہاں سے نکالناہے ۔یہ کسانوںکی فصلیں تباہ کرکے اپنا کاروبار چمکا رہے ہیںاور دھرتی کے لیے ہم جانوں کے نذرا نے پیش کردیتے ہیں۔

مزید : فیصل آباد