دس سال بعد اپیل کا فیصلہ، ہائی کورٹ نے قاتل کی سزائے موت کو عمر قید میں بدل دیا ،4ملزم بری

دس سال بعد اپیل کا فیصلہ، ہائی کورٹ نے قاتل کی سزائے موت کو عمر قید میں بدل ...
دس سال بعد اپیل کا فیصلہ، ہائی کورٹ نے قاتل کی سزائے موت کو عمر قید میں بدل دیا ،4ملزم بری

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی ) لاہور ہائیکورٹ نے قتل کے 5مجرموں کی اپیلوں پر فیصلہ سناتے ہوئے10برس بعد سزائے موت کے ایک اور عمر قید کے 4 ملزموںکو بری کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے ملزمان عمر فاروق، اسلم، اسلام، عبدالمجید اور ناصر کی اپیلوں پر سماعت کی. ملزمان کے خلاف الہ آباد قصور میں امجد نامی شہری کو قتل کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کیا گیا تھا اور ٹرائل کورٹ نے دس برس قبل ملزمان کو سزائیں سنائی تھیں. اپیلوں پر فیصلہ سناتے ہوئے بینچ نے قراردیاکہ پولیس نے اس مقدمے کی ناقص تفتیش کی جبکہ گواہوں کے بیانات میں بھی واضح تضاد پایا جاتا ہے، عدالت نے شک کا فائدہ دیتے ہوئے سزائے موت کے قیدی عمر فاروق جبکہ عمر قید کے مجرم اسلم، اسلام، عبدالمجید اور ناصر بری کرنے کا حکم دے دیاہے۔

مزید : لاہور