ورکنگ باونڈری ، فائرنگ ، گولہ باری ، 3شہری شہید ، 7زخمی ،دشمن کی چیک پوسٹ تباہ ، بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کی طلبی ، احتجاج

ورکنگ باونڈری ، فائرنگ ، گولہ باری ، 3شہری شہید ، 7زخمی ،دشمن کی چیک پوسٹ تباہ ...

  

سیالکوٹ(این این آئی228 آئی این پی228 مانیٹرنگ ڈیسک)سیالکوٹ ورکنگ باونڈری چارواہ سیکٹر کے یہات پر بھارتی سکیورٹی فورسز کی بلا اشتعال فائرنگ اور گولہ باری سے تین شہری شہید اورچار خواتین سمیت سات افراد زخمی ہو گئے۔ بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب بھارتی سکیورٹی فورسز نے سیالکوٹ ورکنگ باونڈری کے چارواہ سیکٹر کے دیہات پر بھاری ہتھیاروں سے فائرنگ گو لہ باری شروع کر دی ۔ شہید ہونے والوں میں محمد اصغر اور محمد رشید جبکہ زخمیوں میں پروین بی بی ،عفت طیبہ،محمد اسلم،نتاشہ،نسیم، عائشہ،سمینہ، شامل ہیں انکو طبی امداد کے لیے سرکاری ہسپتالوں میں منتقل کر دیا گیا ہے، زخمیوں میں بعض کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی ہے علاقے میں ریسکیو ٹیمیں امدادی کارروائیوں میں مصروف ہیں۔ آئی ایس پی آر کے مطابقسیالکوٹ کے گاؤں کندن پور کے قریب ورکنگ باؤنڈری کے چپراڑ سیکٹر پر بھارتی فورسز نے بلا اشتعال فائرنگ کی‘ پنجاب رینجرز نے بھرپور جواب دیتے ہوئے بھارتی چیک پوسٹ تباہ کردی جبکہ دیگر کئی کو بھی نقصان پہنچا۔ دفتر خارجہ نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ کو طلب کرکے ورکنگ بانڈری پر بھارتی اشتعال انگیزی اور دو پاکستانی خواتین کی شہادت پر شدید احتجاج کیا اور احتجاجی مراسلہ دیا ۔دفترخارجہ کے مطابق ڈی جی ساتھ ایشیا اینڈ سارک ڈاکٹر محمد فیصل نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنرکواحتجاجی مراسلہ دیا جس میں کہا گیا کہ ہر گزرتے دن کے ساتھ ایل اوسی و ورکنگ بانڈری پر صورتحال خراب ہورہی ہے، بھارت مسلسل لائن آف کنٹرول اور ورکنگ بانڈری کی خلاف ورزی کررہا ہے جو 2002 ء کے سیز فائر معاہدے سمیت عالمی قوانین کی بھی خلاف ورزی ہے، بھارتی عزائم خطے کے امن کے لئے خطرہ ہیں۔ پاکستان کسی بھی جارحیت اور ملکی حدود کی خلاف ورزی کا دفاع کرنے کے ساتھ ساتھ جوابی کارروائی اپنا حق محفوظ رکھتا ہے۔

بھارت۔ فائرنگ

مزید :

صفحہ اول -