ڈرامہ رچانے والوں کی گالی گلوچ کا جواب عوام کی خدمت سے دینگے : شہباز شریف

ڈرامہ رچانے والوں کی گالی گلوچ کا جواب عوام کی خدمت سے دینگے : شہباز شریف

  

لاہور(جنرل رپورٹر)وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے جناح ہسپتال کے برن یونٹ کا اچانک دورہ کیااور یہاں طبی سہولتوں کا جائزہ لیا۔وزیر اعلی نے زیر علاج مریضوں کی عیادت کی اور ہسپتال میں فراہم کی جانے والی طبی سہولتوں کے بارے میں ان سے پوچھا۔ وزیر اعلی نے ہسپتال میں مریضوں کی عیادت کی اور ان کی خیریت دریافت کی، وہ آئی سی یو میں بھی گئے ۔ وزیر اعلی برن یونٹ میں موجود ڈاکٹروں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دکھی انسانیت کی خدمت کرنے والے ڈاکٹرز میرے سر کے تاج ہیں ۔ ینگ ڈاکٹرز کو یہاں کام کرتا دیکھ کر مجھے بہت خوشی ہوئی ہے ۔ ہم سب کا مشن صرف دکھی انسانیت کی خدمت ہے ۔ آپ کے جو بھی مسائل ہیں ان کے حل کیلئے آپ کے ساتھ بیٹھنے کیلئے تیار ہوں۔ میں ینگ ڈاکٹرز کا مخالف نہیں ہوں بلکہ دکھی انسانیت کی خدمت میں ہاتھ بٹانے والے ڈاکٹروں کی بہت قدر کرتا ہوں۔انہوں نے کہا کہ میں نے اپنا جینا مرنا دکھی انسانیت کی خدمت کیلئے وقف کر رکھا ہے۔ ہسپتالوں کے میرے دورو ں کا مقصدیہاں طبی سہولتوں کو خوب سے خوب تر بنانا ہے ۔وزیر اعلی محمد شہباز شریف نے جناح ہسپتال کے برن یونٹ کے دورہ کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جناح ہسپتال میں سٹیٹ آف دی آرٹ برن یونٹ بنایا گیا ہے اور مجھے ہسپتال میں شاندار انتظامات اور حفظان صحت کے اصولوں کے مطابق صفائی اور دیگر انتظامات کو دیکھ کر بے حد خوشی ہوئی ہے ۔ یہاں دکھی انسانیت کی خدمت کیلئے جدید مشینری ، طبی آلات اور دکھی انسانیت کے خِدمت کے جذبے سے سرشار بہترین ڈاکٹرز ، سرجنز، فزیشنز اور پیرا میڈیکل سٹاف کی ٹیم موجود ہے ۔ انہوں نے کہا کہ میو ہسپتال میں سٹیٹ آف دی آرٹ سرجیکل ٹاور بنایا گیا ہے جو آئندہ دو ہفتے میں پوری طرح آپریشنل ہو گااوریہاں دنیا کی جدید ترین مشینری نصب کی گئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ملتان اور فیصل آباد میں بھی شاندار برن یونٹ بنائے گئے ہیں جبکہ دو مزید برن یونٹ بنانے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے ۔ وزیر اعلی نے میڈیا کے نمائندوں کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ کل لاہور میں جلسے و جلوس کے نام پر جو ڈرامہ رچایا گیا اس میں پاکستان بھر سے سیاسی پارٹیوں کے سربراہان شریک تھے اور وہ سب قادری کے مہمان تھے ۔ کل کے رچائے گئے ڈرامے میں ان کی نظر میرے استعفے پر نہیں تھی بلکہ دکھی انسانیت کی خدمت کے عوامی منصوبوں پر ہے ۔ یہ عناصر گزشتہ ساڑھے چار سالوں میں اپنے صوبوں میں تو کوئی کام کر نہیں سکے اس لئے اب وہ اپنے صوبوں کے عوام کو منہ دکھانے سے کترا رہے ہیں ۔ پشاور میں ڈینگی آیا تو ہم نے وہاں دھرنے جیسا ناٹک نہیں رچایا بلکہ یہاں سے ڈاکٹر فیصل مسعود کی سربراہی میں ڈاکٹروں کی بہترین ٹیم بھجوائی اور ادویات بھی بھجوائیں لیکن خان صاحب ڈینگی سے ڈر کر پہاڑوں پر چڑ ھ گئے ۔۔ نیب میں طلبی کے بارے میں پوچھے گئے سوال کے جواب میں وزیر اعلی نے کہا کہ نیب یا کوئی اور ادارہ میرے خلاف میرے تینوں ادوار حکومت میں ایک دھیلے کی کرپشن ثابت کر دے تو عوام کا ہاتھ اور میرا گریبان ہو گا۔ ایک سوال کے جواب میں وزیر اعلی نے کہا کہ زینب قتل کیس پر تیزی سے کام ہو رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مردان میں قوم کی چار سالہ بیٹی عاصمہ سے بھی درندگی ہوئی ، کراچی فیکٹری میں آگ لگی جس سے درجنوں لوگ اللہ کو پیارے ہوئے ۔ کل ڈرامہ رچانے والوں نے گالم گلوچ کی زبان استعمال کی ، تکہ بوٹی کرنے جیسے الفاظ استعمال کئے ، آپ جو مرضی کرتے رہیں ، آپ کی ان باتوں کا جواب ہم عوام کی خدمت سے دیں گے کیونکہ آپ جو زبان استعمال کرتے ہیں ہم یہ نہیں کر سکتے ۔ ایک اور سوال کے جواب میں کہا کہ پارلیمنٹ پر طبرے بھیجنے والے پارلیمنٹ میں کیوں بیٹھے ہیں ۔ یہ استعفے کیوں نہیں دے دیتے۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمدشہباز شریف نے کوئٹہ کے علاقے زرغون روڈ پر پولیس اہلکاروں پر فائرنگ کے واقعہ کی شدید مذمت کی ہے۔ وزیراعلیٰ نے فائرنگ کے نتیجے میں پولیس اہلکاروں کی شہادت پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے شہید اہلکاروں کے لواحقین سے دلی ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کیا ہے اور زخمی اہلکاروں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی ہے۔دریں اثناء شہبازشریف نے لائن آف کنٹرول پر بھارتی فورسز کی بلااشتعال فائرنگ کی شدید مذمت کی ہے۔ وزیراعلیٰ نے بھارتی فورسز کی فائرنگ سے دو خواتین کے جاں بحق ہونے پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے ۔شہبازشریف سے آغاخان ٹرسٹ فار کلچرل کے وفد نے ملاقات کی۔وفد کی قیادت آغاخان ٹرسٹ فار کلچرل ،جنیوا کے جنرل مینجرلوئس مونرئیل کررہے تھے۔ملاقات میں تاریخی مقامات کے تحفظ اور انکی دیکھ بھال کے حوالے سے جاری پروگرام میں تعاون کو مزید بڑھانے پر تبادلہ خیال ہوا۔آغاخان ٹرسٹ فار کلچرل کی جانب سے شالامار باغ اورمقبرہ جہانگیر کے تاریخی مقامات کے تحفظ،بہتری اوردیکھ بھال کے حوالے سے تکنیکی معاونت مہیا کرنے کی یقین دہانی کرائی گئی۔وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ آغاخان ٹرسٹ کی فلاحی سرگرمیوں کیلئے اقدامات قابل تعریف ہیں اور خصوصاً تعلیم اورصحت کے شعبے میں آغاخان ٹرسٹ کی خدمات لائق تحسین ہیں۔وفد میں تاریخی شہروں کے پروگرام کے ڈائریکٹرکیمرون راشتی اور چےئرمین بورڈ آف ڈائریکٹر آغاخان کلچرل سروسز پاکستان اکبر علی پسنانی شامل تھے ۔ڈی جی لاہوروالڈ سٹی اتھارٹی کامران لاشاری بھی اس موقع پر موجود تھے ۔

مزید :

صفحہ اول -