پاسکو ملازمین کی بحالی کیخلاف حکومتی اپیل پر فیصلہ محفوظ

پاسکو ملازمین کی بحالی کیخلاف حکومتی اپیل پر فیصلہ محفوظ

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے پاسکو ملازمین کی بحالی کے فیصلے کے خلاف حکومتی اپیل پر فیصلہ محفوظ کر لیا ہے۔جسٹس عائشہ اے ملک کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے حکومتی اپیل پر سماعت کی، سرکاری وکیل نے موقف اختیار کیا کہ ہائیکورٹ کے سنگل بنچ نے پاسکو ملازمین کی بحالی کا غیرقانونی فیصلہ دیاہے جبکہ پاسکو ملازمین کو ہائیکورٹ کی بجائے این آئی آر سی سے رجوع کرنا چاہیے تھا، انہوں نے دو رکنی بنچ کو آگاہ کیا کہ پاسکو کے 34درخواست گزار ملازمین کی بھرتیوں میں بے ضابطگیاں ہوئی تھیں اس لئے انہیں نوکریوں سے برطرف کیا گیا تھا ،سنگل بنچ کا پاسکو کے 34 ملازمین کی بحالی کا فیصلہ کالعدم کیا جائے، پاسکو ملازمین کی طرف سے نبیل جاوید کاہلوں ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ پاسکو ملازمین کو قانون کے مطابق بھرتی کیا گیا تھا اور ایم ڈی پاسکو نے ملازمین کو شوکاز نوٹس کے بغیر نوکریوں سے برطرف کردیا جبکہ ایم ڈی کو برطرفی کا حکم دینے کا اختیار ہی نہیں تھا ،حکومتی اپیل کو خارج کیا جائے، عدالت نے فریقین کے وکلا کے دلائل مکمل ہونے کے بعد پاسکو ملازمین کی بحالی کے فیصلے کے خلاف حکومتی اپیل پر فیصلہ محفوظ کر لیا ہے۔

پاسکو ملازمین

مزید :

صفحہ آخر -