ا مریکی امداد کے بغیر افغان حکومت تیسرے روز ہی گر جائے گی،اشرف غنی

ا مریکی امداد کے بغیر افغان حکومت تیسرے روز ہی گر جائے گی،اشرف غنی

واشنگٹن(این این آئی) افغانستان کے صدر اشرف غنی نے عندیہ دیا ہے کہ امریکی امداد کے بغیر افغان حکومت کا وجودہ باقی نہیں رہے گا اور افغان نیشنل آرمی کی بنیادیں 6 ماہ سے زیادہ عرصے تک قائم نہیں رہ سکیں گی۔غیر ملکی ٹیلی ویژن کے پروگرام میں انٹرویو میں انہوں نے اقرار کیا کہ افغانستان کی حکومت مکمل طورپر واشنگٹن کے رحم و کرم پر ہے ۔افغان صدر اشرف غنی نے ایک سوال کے جواب میں کہا مختلف ماہرین کا نقطہ نظر بالکل ٹھیک ہے، حکومت ابھی اس قابل نہیں کہ اپنی فوج کو امریکی امداد کے بغیر 6 ماہ تک چلا سکے، اگر امریکا امداد سے ہاتھ کھنیچ لیتا تو ہماری حکومت تیسرے روز ہی گر جائے گی۔اشرف غنی نے اقرار کیا کہ پشتون بیلٹ کے بڑے حصے پر طالبان کا کنٹرول ہے اور کابل حکومت انہیں بے دخل کرنے کی صلاحیت نہیں رکھتی۔افغان صدر نے بتایا کہ افغانستان کو 21 بین الااقوامی دہشت گرد تنظمیوں سے خطرہ ہے اور درجنوں خودکش حملہ آوار افغانستان بھیجے جارہے ہیں۔ طالبان نے عوام کو اتنا خوفزدہ کردیا ہے کہ وہ حکومت پر یقین کرنے پرآمادہ نہیں ہیں۔صحافی نے افغان صدر سے سوال کیا کہ اگر آپ اپنے دارالحکومت کو محفوظ نہیں بنا سکتے تو کیسے پورے ملک کو بچا سکتے ہیں جس پر اشرف غنی نے کہا کہ آپ مجھے بتائیں کیا نیویارک پر حملہ روک سکتے ہیں،کیا آپ لندن کو حملوں سے بچا سکتے ہیں۔

مزید : صفحہ آخر