مردان میں ضلع نائب ناظم کا پاپولیشن آفس پر چھاپہ

مردان میں ضلع نائب ناظم کا پاپولیشن آفس پر چھاپہ

  

مردان (بیورو رپورٹ) ضلعی نائب ناظم اسد علی نے ڈسٹرکٹ پاپولیشن افسر پر چھاپہ مار کر بغیر اجازت ڈیوٹی سے غیر حاضر دسٹرکٹ افسر سمیت پانچ اہلکاروں سے وضاحت طلب کر لی ہے۔انہوں نے ماتحت محکموں کے افسران کو خبردار کیا ہے کہ اپنی حاضر یقینی بنا کر عوام کو سہولیات فراہم کریں بصورت دیگر ان کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائیگی۔انہوں نے کہاہے کہ عوامی شکایات کی روشنی میں انہوں نے ڈسٹرکٹ پاپولیشن اینڈ ویلفےئر کے دفتر پر اچانک چھاپہ مارااور حاضری رجسٹر چیک کی تو معلوم ہوا کہ ڈسٹرکٹ افسر اکرام اللہ سمیت دیگر اہلکارجاوید اقبال،نعیم الرحمان، نورحسین،رخسار علی بغیر رخصت کے چھٹی پر ہے جس پر انہوں نے مذکورہ افسر اور اہلکاروں سے وضاحت طلب کر لی ہے۔اسد علی نے کہاہے کہ سرکاری ملازمین عوام کے ٹیکس کے پیسوں سے تنخواہیں لیتے ہیں اور کسی کو بھی یہ حق حاصل نہیں ہے کہ عوامی مسائل کے حل میں لیت و لعل سے کام لیں۔انہوں نے کہاہے کہ پاپولیشن دفتر کے زیر انتظام عوام کے ریلیف کے لئے چلنے والے مختلف سنٹرز میں بھی اکثر اوقات کوئی موجود نہیں ہوتا اور سنٹرز اکثربند پڑے رہتے ہیں۔انہوں نے کہاہے کہ ضلع کے ماتحت محکموں کے افسران ڈیوٹی سے جب غیر حاضر پائے جاتے ہیں تو پشاور میں میٹنگ کا بہانہ بنا تے ہیں لیکن قانون کے مطابق ایسے تمام محکمے جن کے افسران پشاور یا دیگر اضلاع میں میٹنگ کے لئے جاتے ہیں تو تحریری طور پر ضلع کے چیف ایگزیکٹو کو آگا ہ کرتے ہیں اور پاپولیشن ویلفےئر دفتر کے اعلیٰ افسر کو جب ڈیوٹی سے غیر حاضر پایا گیا تو وہ بھی پشاور میں میٹنگ کا بہانہ کر رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے سرکاری ملازمین کو اپ گریڈیشن کے ساتھ ساتھ دیگر مراعات بھی حاصل ہے لیکن پھر بھی ڈیوٹی احسن طریقے سے انجام نہیں دیتے اور ایسے تمام افسرجو اپنی ذمہ داریاں احسن طریقے سے انجام نہیں دیتے توانہیں مردان میں ڈیوٹی کا حق حاصل نہیں ہے۔ انہوں نے مذکورہ افسر اور اہلکاروں کے خلاف کاروائی کے لئے سیکرٹری پاپولیشن ، کمشنرمردان ڈویژن،ڈپٹی کمشنر اور ضلع ناظم کوتحریر مراسلہ بھیج دیا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -