ترناب فارم میں افغان باشندے کے اندھے قتل کا سراغ لگالیاگیا

ترناب فارم میں افغان باشندے کے اندھے قتل کا سراغ لگالیاگیا

  

پشاور( کرائم رپورٹر )کیپٹل سٹی پولیس پشاور نے چمکنی کے علاقے ترناب فارم میں افغان باشندے کے اندھے قتل کا سراغ لگالیا قتل میں ملوث اجرتی قاتل کو ساتھی سمیت گرفتار کر لیاملزم مقتول کا 53 لاکھ کا قرض دارتھا جس نے مقتول کے قرضہ کی رقم واپس کرنے کی بجائے اسے موت کے گھاٹ اتار دیا تفصیلات کے مطابق مورخہ 24/12/2017 کو تھانہ چمکنی میں مدعی حبیب اللہ ولد حضرت نبی سکنہ افغانستان حال سیٹھی ٹاؤن نے رپورٹ درج کراتے ہوئے پولیس کو بتایا کہ وہ اپنے دوست عبدالحفیظ ولد زیارت گل سکنہ افغانستان کے ہمراہ ترناب فارم جارہا تھا اس د وران ر استہ میں دو نامعلوم موٹر سائیکل سوار ملزمان نے انہیں گھیر لیا اورہم پر اسلحہ اتشین سے فائرنگ شروع کردی جس کے نتیجہ میں وہ دونوں شدید زخمی ہوگئے جبکہ ملزمان ارتکاب جرم کے بعد فرارہوگئے مجروحین کوطبی امداد کیلئے ہسپتال داخل کرایا گیا جہاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے عبدالحفیظ جان بحق ہوگیا سی سی پی او محمدطاہر خان نے افغان باشندے کے قتل کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے ملزمان کی گرفتاری کیلئے ایس ایس پی آپریشن جاوید اقبال کی نگرانی میں ایس پی رورل شفیع اللہ گنڈا پور کی قیادت میں اے ایس پی چمکنی خان زیب خان ٗ ایس ایچ اوچمکنی محمد غنی خان ، تفتیشی افسر ایس ائی عرفان خان بمعہ دیگرنفری پولیس پر مشتمل خصوصی ٹیم تشکیل دی جنہوں نے شب وروز مختلف زاویوں سے سائنسی خطوط پر تفتیش کرتے ہوئے چند ہی روز میں اندھے قتل کا سراغ لگانے میں کامیابی حاصل کرلی اورواقعہ میں ملوث ملزم طارق ولدمولوی فاروق سکنہ چوکی ممریزوحدت کالونی اورعطاء الرحمان ولد عبید اللہ سکنہ بنات کلے کو گرفتار کرلیا پولیس کے مطابق وقوعہ لین دین کا تنازعہ تھا ملزم طارق نے مقتول عبدالحفیظ سے53 لاکھ روپے قرض لیے تھے جس کی واپسی کے مطالبہ پر اس نے قرضہ کی رقم واپس کرنے کی بجائے اجرتی قاتلوں کی مدد سے قرض خواہ کو ہی فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتار دیاملزمان نے دوران تفتیش اپنے دیگر ساتھیوں کے نام بھی اگل دیے ہیں جن کی گرفتاری بھی جلد عمل میں لائی جائیگی پولیس نے گرفتار ملزمان سے مزید تفتیش بھی شروع کردی ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -