موسمی انفلوئنز کی روک تھام، آگاہی مہم تیز کرنے کا فیصلہ

موسمی انفلوئنز کی روک تھام، آگاہی مہم تیز کرنے کا فیصلہ

  

لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف کی ہدایت پر موسمی زکام N1، H1 انفلونزا کی روک تھام اور مریضوں کے علاج معالجہ کے انتظامات کی مانیٹرنگ کے لئے تشکیل کردہ کمیٹی کا اجلاس محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کے کمیٹی روم میں ہوا جس کی صدارت صوبائی وزیرصحت خواجہ عمران نذیر نے کی۔ اجلاس میں صوبے میں موسمی زکام کی صورتحال خصوصاً ملتان میں بیماری کی روک تھام کے حوالے سے اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں سیکرٹری ہیلتھ علی جان خان، سپیشل سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر ڈاکٹر ساجد محمود چوہان، ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ ڈاکٹر اختر رشید ملک، ممبر ہیلتھ پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ، ایڈیشنل سیکرٹری ٹیکنیکل ڈاکٹر عاصم الطاف، ڈاکٹر نعیم الدین میاں اور عالمی ادارہ صحت کے نمائندے ڈاکٹر جمشید احمد نے شرکت کی۔ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ ڈاکٹر اختر رشید ملک نے اجلاس کو بتایا کہ اب تک پورے صوبے میں انفلوئنزاکے 134 کنفرم مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ہر مریض کا کیس رسپانس کرایا گیا ہے اور مریضوں کا علاج کرنے والے ڈاکٹرز، نرسز کی بھی ویکسینیشن کی گئی ہے۔ عالمی ادارہ صحت کے نمائندے ڈاکٹر جمشید نے کہا کہ اصل ضرورت عوام کے اندر زیادہ سے زیادہ آگاہی پیدا کرنا ہے تاکہ لوگ احتیاط کریں، کھانستے اور چھینکتے وقت رومال کا استعمال کریں ۔ نیز نزلہ زکام میں مبتلا شخص سے مصافحہ کر کے ہاتھ صابن سے دھوئیں۔ انہوں نے کہا کہ سکولوں کے بچوں اور ذرائع ابلاغ کے ذریعے یہ پیغام گھر گھر پہنچانے کی ضرورت ہے۔ وزیرصحت خواجہ عمران نذیر نے ہدایت کی کہ بیماری پر قابو پانے کے لئے اقدامات مزید تیز کئے جائیں اور موسمی زکام سے بچاؤ کی تدابیر بارے بھرپور آگاہی مہم جاری رکھی جائے۔ اس مقصد کے لئے الیکٹرانک میڈیا اور نیوزچینلز کے ساتھ ساتھ کیبل چینلز کو بھی گھر گھر پیغام پہنچانے کے لئے استعمال میں لایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے N1، H1 انفلونزا کی صورتحال مانیٹر کرنے، بیماری کی روک تھام اور مریضوں کے علاج معالجہ کے انتظامات یقینی بنانے کے لئے ٹیکنیکل کمیٹی تشکیل دی ہے جو اپنا کام بھرپور طریقے سے سرانجام دے رہی ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -