ٹاپ کلاس لیڈر شپ کی عمر یں 70 سال کے قریب‘ الیکشن2018ء انتہائی اہم

ٹاپ کلاس لیڈر شپ کی عمر یں 70 سال کے قریب‘ الیکشن2018ء انتہائی اہم

  

کرم پور ( نمائندہ پاکستان ) 2018کا مجوزہ قومی الیکشن تمام سیاسی جماعتوں کی لیڈر شپ کیلئے انتہائی اہمیت اختیار کر گیا کیونکہ آئین پاکستان کے تحت 70سال سے زائد عمر کا کوئی بھی شخص وزیر اعظم نہیں بن سکتا ۔جبکہ مسلم لیگ ’’ن‘‘ کے لیڈر میاں نواز شریف ،میاں شہباز شریف،۔پیپلز(بقیہ نمبر45صفحہ12پر )

پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری،اور تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان ۔جمیت اعلما ء اسلام مولانا فصل الرحمن سمیت تقریباً تمام سیاسی جماعتوں کی ٹاپ کلاس لیڈر شپ کی عمریں 70سال کے قریب ہیں اور اگر ان میں سے کوئی بھی 2018کے الیکشن میں کامیاب ہو گیا تو اس کا آخری حکومتی عہدہ ہوگا ۔بلکہ مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کی تمام تر سیاست ان کی نئی نسل کو منتقل ہو جائے گی جبکہ تحریک انصاف،جمعیت اعلماء اسلام ۔جماعت اسلامی ،جمعیت علما ء پاکستان،سندھ ڈیمو کرینک الاٹس ،ایم کیو ایم پاکستان،سمیت تمام باقی ماندہ سیاسی جماعتوں کی بھی نئی لیڈر شپ سامنے آئے گی ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -