ہسپتال میں وارڈبوائے نے مبینہ طورپر تیمارداری کیلئے آنیوالی لڑکی کو بدفعلی کا نشانہ بنا ڈالا

ہسپتال میں وارڈبوائے نے مبینہ طورپر تیمارداری کیلئے آنیوالی لڑکی کو بدفعلی ...
ہسپتال میں وارڈبوائے نے مبینہ طورپر تیمارداری کیلئے آنیوالی لڑکی کو بدفعلی کا نشانہ بنا ڈالا

  

ساہیوال (ویب ڈیسک) ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ٹیچنگ ہسپتال ساہیوال کی چلڈرن وارڈ میں مبینہ طورپر وارڈ بوائے نے لڑکی کو بدفعلی کا نشانہ بنا ڈالا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سکیورٹی گارڈ نے لڑکی کی چیخ و پکار سن کر ملزم عمران کو پکڑ کرہسپتال انتظامیہ کے حوالے کردیاتاہم معاملہ دبانے کیلئے ایم ایس نے پولیس سے ساز باز کر کے متاثرہ لڑکی سے زبردستی سادہ کاغذات پر انگوٹھے لگوا لئے اور صحافیوں کو بتایا کہ ایسا کوئی واقعہ ہوا ہی نہیں ۔

دوسری طرف متاثرہ لڑکی کے بیان کے مطابق اسے معلوم نہیں تھا کہ کس چیز کیلئے انگوٹھے لگوائے جارہے ہیں۔ لڑکی کے مطابق وہ اپنے ماموں کے ہمراہ اپنے کزن عمیر نعمان کی تیمارداری کیلئے ہسپتال آئی تھی، ہسپتال انتظامیہ نے دباﺅ ڈالا تھا کہ ایسا کوئی بیان نہ دیں ،نہیں تو ہم آپ کے مریض کو ڈسچارج کردیں گے۔

متاثرہ لڑکی کے مطابق ایم ایس نے ملزم کو بلا کر کوئی پوچھ گچھ تک نہیں کی۔ملزم عمران کو حوالہ پولیس تو کیا گیا ہے مگرآخری اطلاعات تک کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی۔ 

مزید : جرم و انصاف /علاقائی /پنجاب /ساہیوال