ہندوستان کے ممتاز مسلمان لیڈر بھی میدان میں آ گئے ،بھارتی مسلمانوں سے متنازع فلم ’’پدما وت ‘‘ کے حوالے سے ایسی اپیل کر دی کہ ہر کوئی حیران رہ جائے گا

ہندوستان کے ممتاز مسلمان لیڈر بھی میدان میں آ گئے ،بھارتی مسلمانوں سے متنازع ...
ہندوستان کے ممتاز مسلمان لیڈر بھی میدان میں آ گئے ،بھارتی مسلمانوں سے متنازع فلم ’’پدما وت ‘‘ کے حوالے سے ایسی اپیل کر دی کہ ہر کوئی حیران رہ جائے گا

  

حیدر آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)ہندوستان کی انتہائی متنازع فلم ’’پدما وت ‘‘ کے حوالے سے انڈیا میں شروع ہونے والی’’لفظی گولہ باری‘‘ اور جنگ ہے کہ تھمنے کا نام ہی نہیں لے رہی ،ایسے میں بھارت کے ممتاز مسلمان لیڈر اور آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ سید اسد الدین اویسی بھی میدان میں آ گئے ہیں اور انہوں نے مسلمانوں سے اپیل کی ہے کہ وہ’’ پدماوت ‘‘ فلم نہ دیکھیں ۔

بھارتی نجی ٹی وی چینل ’’انڈیا ٹی وی ‘‘ کے مطابق آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ اسد الدین اویسی نے ہندوستانی مسلمانوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ’’پدماوت‘‘ فلم نہ دیکھیں ، یہ ایک بکواس فلم ہے اور مسلمان اس فلم کو دیکھنے میں اپنا وقت ضائع نہ کریں، فلم بہت بری اوربکواس ہے ، مسلم برادری کو راجپوت سماج سے سبق لینا چاہئے جو فلم کو ریلیز نہ ہونے کے حوالے سے متحد ہیں۔وارنگل ضلع میں ایک عوامی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے اسد الدین اویسی کا کہنا تھا کہ بھارت میں بسنے والے مسلمان بالی ووڈ کی نئی ریلیز ہونے والی فلم دیکھنے نہ جائیں ، اللہ نے آپ کو دو گھنٹے کی فلم دیکھنے کیلئے نہیں بنایا ہے۔انہوں نے کہا کہ نریندر مودی نے اس فلم کیلئے 12 ممبران کی ایک کمیٹی تشکیل دی ، (لیکن) کسی نے بھی ہمارے خلاف قانون ( تین طلاق قانون ) بناتے وقت ہم سے رائے مشورہ بھی نہیں کیا گیا ۔یاد رہے کہ گذشتہ روز بھارتی سپریم کورٹ نے فلم ’’پدماوت‘‘ کی ریلیز پر ریاستوں کی پابندی کو ہٹاتے ہوئے 25 جنوری کو پورے ہندوستان میں فلم ریلیز کرنے کی اجازت دیدی تھی۔

مزید : تفریح