سری لنکا اور چین مل کر سری لنکا میں بجلی گھر کی تعمیر کریں گے

سری لنکا اور چین مل کر سری لنکا میں بجلی گھر کی تعمیر کریں گے
سری لنکا اور چین مل کر سری لنکا میں بجلی گھر کی تعمیر کریں گے

  

کولمبو (آئی این پی ) سری لنکا اور چین نے سری لنکا کے جنوب میں مونی راگالامیں سری لنکا کے سب سے بڑے ڈینڈرو پاور پلانٹ کی تعمیر کیلئے مشترکہ منصوبے پر دستخط کئے ہیں، اس بجلی سے ملک کے نیشنل پاور گرڈ کو ہر سال 70ہزار میگاواٹ قابل تجدید توانائی فراہم کی جائے گی، اس مشترکہ منصوبے پر بیجنگ کی فل ڈائی مینشن پاور ٹیک کمپنی لمٹیڈ ، نانجنگ ٹربائن و الیکٹرک مشینری گروپ کمپنی لمٹیڈ اور سری لنکا کے آئی ایم ایس ہولڈنگ نے دستخط کئے ہیں۔

غیرملکی میڈیاکے مطابق معاہدے پر دستخط کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سری لنکا کی آئی ایم ایس ہولڈنگز پرائیویٹ لمٹیڈ کے چیئرمین جناورا درما وردنا کا کہناتھا کہ ڈینڈرو پاور کافی مقدار میں پیدا ہونیوالے بائیو ماس (فیول وڈ ) سے بجلی کی پیداوار ہے اور اس منصوبے میں گلری سی ڈیا سپیم درخت کی لکڑی سے بجلی پیدا کی جائے گی ۔انہوں نے کہا کہ خشک سالی کی شکار مونی راگالا علاقے کے سینکڑوں کاشتکار اس منصوبے سے مستفید ہوں گے کیونکہ اس بجلی گھرکے نتیجے میں گلری سی ڈیا سپیم لکڑی فراہم کرنے والے کاشتکاروں کو سالانہ 3.2ملین امریکی ڈالر کی آمدن ہو گی۔

پاور پلانٹ کے ٹربائن کو چلانے کیلئے شمسی بجلی کی بجائے ایندھن کے طورپر گلری سی ڈیا سپیم لکڑی کا انتخاب کرنے کی وجوہ کی وضاحت کرتے ہوئے درما وردنا نے کہا کہ کمپنی کا بنیادی مشن یہ ہے کہ اس جزیرہ نما ملک کے قحط زدہ علاقے کے کاشتکاروں کو مالیاتی تحفظ دیا جائے ،توقع ہے کہ یہ بجلی گھر ستمبر کے آخر تک کام شروع کر دے گا ۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید :

بین الاقوامی -