لیبیا کی اہم شخصیات کی سکیورٹی ترک ایلیٹ فورس کے حوالے کر ے کا ا کشاف

لیبیا کی اہم شخصیات کی سکیورٹی ترک ایلیٹ فورس کے حوالے کر ے کا ا کشاف

  



طرابلس (ای ای آئی)لیبیا کی اہم حکومتی شخصیات کی سیکیورٹی کی ذمہ داری ترکی کی ایلیٹ فورس کے اہلکاروں کو سو پ دی گئی۔عرب ٹی وی کے مطابق ذرائع کا کہ ا تھا کہ تْرکی شامی عسکریت پس د گروہوں کے ع اصر کو لیبیا میں لڑ ے کے لیے ج گی تربیت دے رہا ہے۔ ترکی کی شہریت رکھ ے والے شامی باش دے لیبیا میں ج گی گروپوں کی قیادت کررہے ہیں۔ ترکی کی خصوصی دستے الوفاق حکومت میں شامل شخصیات کے تحفظ کے لیے طرابلس پہ چ گئے ہیں اور ا ہیں اہم شخصیات کی سیکیورٹی پر تعی ات کیا گیا ہے۔ذرائع ے بتایا کہ حمزہ العمر ایک شامی شہری ہے جس ے تقریبا سات ماہ قبل ترکی کی شہریت حاصل کی تھی۔ اسے لیبیا میں بھیجا گیا ہے جو شامی عسکریت پس دوں کی رہ مائی پر مامور ہے۔ذرائع ے بتایا کہ ترکی ے شام کے چار گروپوں کو عسکری تربیت فراہم کی ہے۔ ہر گروپ 35 ج گجوؤں پر مشتمل ہے۔ ا ہیں شہروں کے ا در گوریلا لڑائی کی خصوصی تربیت فراہم کی گئی ہے۔ذرائع ے بتایا کہ شامی ج گجوؤں کو ترکی میں مختلف تربیتی کورسز کے عمل سے گذارا جاتا ہے۔

بعض کو 14 د تک تربیت دی گئی۔ کچھ ج گجوؤں کو 21 اوربعض کو45 د کی ٹری گ دی گئی۔ ا ہیں اسٹریٹ وار کی خصوصی تربیت دی گئی تاکہ ج رل خلیفہ حفتر کی فوج کے طرابلس میں داخلے کے بعد دو بہ دو لڑائی میں اس کا مقابلہ کیا جا سکے۔ ترکی میں ج گی تربیت پا ے والے ج گجوؤں میں کئی ایسے ع اصر بھی ہیں جو ماضی میں بھی ٹری گ لے چکے ہیں۔ ا ہیں ترکی میں ازمیر کیرشھر اور کوچا کے مقامات پر قائم کیمپوں میں تربیت دی جاتی ہے۔ذرائع ے ترکی اور الوفاق حکومت کے مابی ہو ے والے معاہدے کے بارے میں بات کی جس میں اس بات کی ضما ت دی گئی ہے کہ ا قرہ لیبیا کے علاقوں کے ا در ترک فوجی دستوں کی موجودگی کے پورے عرصے کے لیے رقوم حاصل کرے گا۔ترکی ے خشکی اور پا ی میں لڑ ے والے میری ز کی تعی اتی کا بھی فیصلہ کیا ہے تاکہ طرابلس حکومت کو یش ل آرمی طرف سیلاحق خطرات کا مقابلہ کر ے میں اس کی مدد کی جاسکے۔

مزید : علاقائی