احتساب کے بجائے آٹا بجلی سستی کردیتے تو حکومت کیلئے بہتر ہوتا، شیخ رشید

  احتساب کے بجائے آٹا بجلی سستی کردیتے تو حکومت کیلئے بہتر ہوتا، شیخ رشید

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی وزیر برائے ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ احتساب کے بجائے آٹا بجلی سستی کردیتے تو حکومت کے لیے بہتر ہوتا۔جیو نیوز کے پروگرام ’نیا پاکستان‘ میں گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ ملک میں موجود سیاسی مسائل عمران خان کے بجائے ان لوگوں کے ہیں جو لندن میں ہیں۔انہوں نے کہا کہ فروری اور مارچ میں دو مہینے اوپر نیچے ہوں گے لیکن عمران خان نہیں جارہے، شہباز شریف غالباً مارچ اپریل میں آجائیں گے تاہم مریم کو باہر جانے کی اجازت نہیں ملے گی۔انہوں نے کہا کہ سستا آٹا اور سستی بجلی دیتے تو لوگ مطمئن ہوجاتے۔ شیخ رشید نے کہا ہے کہ بہت سی افواہیں چل رہی ہیں لیکن کچھ نہیں ہوگا، شہباز شریف اور مریم نواز کے 2 نئے کیسز آنے والے ہیں، نواز شریف کو واپس آنے میں کوئی دلچسپی نہیں، پہلے ہی کہا تھا نواز شریف باہر جا رہے ہیں، زرداری بھی جیل سے نکلیں گے۔وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا نیب آرڈیننس پر بھی چلمن کے پیچھے تعاون جاری ہےِ، امید ہے الیکشن کمشنر کا معاملہ بھی اتفاق رائے سے حل ہوگا۔ انہوں نے کہا عمران خان کیساتھ، ان کا اتحادی ہوں، تحریک انصاف کا رکن نہیں ہوں، مسائل ہیں، مہنگائی ہے، لیکن عمران خان کے علاوہ کوئی متبادل نہیں، عوام سے کہتا ہوں ڈیڑھ سال کا اور وقت دیں، عمران خان کے ساتھ سائے کی طرح کھڑا ہوں، جب تک عمران خان عثمان بزدار کے ساتھ ہیں، میں ان کے ساتھ ہوں۔شیخ رشید کا کہنا تھا سمجھتا ہوں کشمیر کے مسئلے پر ہم نے کمزوری دکھائی، مسئلہ کشمیر پر پاکستانیوں نے تاریخی ردعمل دیا، پاکستان نے امریکا ایران چپقلش میں بھی ذمہ داری کا مظاہرہ کیا، شام، لیبیا اور یمن سے پھیلتی ہوئی جنگ بڑھتی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا ریلوے کے محکمے میں مارچ میں ایک لاکھ نوکریاں نکلیں گی، مارچ میں ریلوے میں بڑی تعداد میں لوگ ریٹائرڈ ہوں گے، سی پیک کا پی سی ون اکتوبر کو جمع کرا دیا، مارچ سے پہلے منظوری ہو جائے گی، 24 کروڑ ڈالر 10 سال کے عرصے میں واپس ہوں گے۔

شیخ رشید

مزید : صفحہ اول