بی آئی ایس پی سے فائدہ اٹھانے والے 4ملازمین کو برطرف کر دیا ہے: ثانیہ نشتر

بی آئی ایس پی سے فائدہ اٹھانے والے 4ملازمین کو برطرف کر دیا ہے: ثانیہ نشتر

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر)بینظیرانکم سپورٹ پروگرام کی چیئرپرسن اوروزیراعظم کی معاون خصوصی ثانیہ نشترنے کہاہے کہ بے نظیرانکم سپورٹ سے فائدہ اٹھانے والے تمام صوبائی ملازمین کی فہرست صوبوں کے چیف سیکرٹریز کو بھیج دی ہیں۔گریڈ ایک سے گریڈ سولہ اوراس کے اوپرکے افسران مستحق بن کرپیسے وصول کررہے تھے انہوں نے کہاکہ بی آئی ایس پی سے گریڈ17کیچار افسران کو نکالا ہے، چار لاکھ روپے وصول کرکے قومی خزانہ میں جمع کرادیے ہیں جبکہ مزید افسران کے خلاف انکوائری جاری ہے۔وہ ملیرکراچی میں بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کی بینیفشریز کی کھلی کچہری سے خطاب کررہی تھی جس میں مستحق عورتوں کی بڑی تعداد موجود تھی۔ ثانیہ نشترنے کہاکہ حکومت کے لیے مستحق افراد بہت اہم ہیں۔ آپ لوگوں سے آپ کے مسائل سننا اہم ہے جس سے ہمیں آپ لوگوں کے مسئل میں آسانی پیدا کرنے میں مدد ملے گی۔ اللہ نے مجھے اس عہدے کے لئے اسلئیے منتخب کیا ہے تاکہ میں آپ لوگوں کے لئے کچھ کر سکوں۔ وزیر اعظم کی خواہش ہے کہ غریب اور حقدار لوگوں کے لئے اقدامات کئیے جائیں اور ان کے وظیفے کی رقم میں اضافہ کیا جارہا ہے جو کہ پہلے پانچ ہزار ملتے تھے اب چھ ہزار ملیں گے۔انہوں نے کہا کہ ہم مستحق لوگوں کو بلکل نہیں نکال رہے ہیں، ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ چھ ہزار کی رقم قسطوں میں دیں اور ہر ماہ کے پہلے ہفتے میں دو ہزار ملیں گے۔ ہر بہن کا ایک بینک اکانٹ بھی ہوگا۔ اس بینک اکانٹ کے لیے خاص اقدامات کئے ہیں۔ اب خواتین اے ٹی ایم کے ذریعے بھی پیسے لے سکتی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ میں برقعہ پہن کر اکثر بینیفشریز کے حالات کا جائزہ لینے کے لیے اسلام آباد میں نکلتی ہوں۔ اب کرپشن پر خاص کریک ڈان ہوگا۔ گریڈ سترہ کے چار افسران کل سسپینڈ ہوئے ہیں۔ بی آئی ایس پی میں ایک لاکھ چالیس ہزار سرکاری ملازم بینفشری بنے ہوئے تھے۔ گریڈ ایک سے گریڈ سولہ تک کے لوگ بھی شامل تھے۔ اس میں پاکستان پوسٹ کے ملازمین بھی شامل ہیں۔ اسی دن سے ہم نے کاروائی کا آغاز کردیا تھا۔ ملوث افراد کے خلاف ڈسپلنری ایکشن لیں گے۔ دیگر صوبوں اور محکمہ کے لوگ بھی شامل ہیں جن کے خلاف ان کے صوبائی حکومتیں کاروائی کریں گی۔ تمام صوبائی ملازمین کی فہرست صوبوں کے چیف سیکرٹری کو بھیج دی ہیں۔گریڈ ایک سے گریڈ سولہ تک کے لوگ بھی شامل تھے۔ گذشتہ روز بی آئی ایس پی سے گریڈ17کیچار افسر کو نکالا ہے، چار لاکھ روپے وصول کرکے قومی خزانہ میں جمع کرادیے ہیں، دو مزید افسران کی انکوائیری جاری ہے۔ثانیہ نشتر نے کہا کہ وزیر اعظم دن رات کوشش کررہے ہیں۔ مجھے آپ سب کی مدد کی ضرورت ہے ہم احساس پروگرام میں مختلف لوگوں کے لیے مختلف پروگرام کر رہے ہیں۔ ہمارا ہدف ہے کہ کفالت پروگرام جو غریب خواتین لیے ہو، یہ کفالت پروگرام آگے چل کر ان خواتین کو بہت فائدہ دے گا۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے لئیے غریب خواتین اہم ہیں۔ ہم آپ کے مسائل سننا چاہتے ہیں کیونکہ اسطرح ہر پروگرام میں بہتری کی گنجائش ہوتی ہے اور لوگوں کے لئے آسانیاں پیداکرنا ہمارا مقصد ہے۔اللہ پاک جس کو ذمہ داری دیتا ہے وہ بہتر ہی ہوتا ہے۔ اسلئیے وزیراعظم کی خاص ہدایت ہے کہ جوپسماندہ علاقوں کے لوگ ہیں ان کی مدد کی جائے۔ پہلے مستحق کو پتہ نہیں ہوتا تھا کہ پیسے کب آنے ہیں۔ اب وہ معلومات رکھ سکیں گے۔ اب انگوٹھا لگانے سے مستحق عورت کا بینک اکاؤنٹ کھل جائے گا اور جوعورت بچت کرنا چاہے کرسکے گی۔ڈاکٹر ثانیہ نشترنے کہا کہ وزیر اعظم دن رات کوشش کررہے ہیں اور ان کی خواہش ہے کہ غریب اور حقدار لوگوں کے لئے اقدامات لیں اور وظیفے کی رقم میں اضافہ کریں۔ لوگوں کے لئے آسانیاں پیدا کرنا مقصود ہے

مزید : صفحہ اول