12 سال سے زائد عمر کے طلبہ کی کورونا ویکسینیشن لازمی قرار

 12 سال سے زائد عمر کے طلبہ کی کورونا ویکسینیشن لازمی قرار
 12 سال سے زائد عمر کے طلبہ کی کورونا ویکسینیشن لازمی قرار

  

 اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )ملک بھر کے تعلیمی اداروں میں 12 سال سے زائد عمر کے طلبہ کی کورونا ویکسینیشن لازمی قرار دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق  نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر (این سی او سی) نے ملک بھر کے تعلیمی اداروں میں کورونا ٹیسٹنگ مہم چلانے کا فیصلہ کر لیا ہے، جس کے دوران بارہ سال سے زائد عمر کے تمام طالب علموں کی ویکسینیشن کو یقینی بنایا جائے گا۔نیشنل ہیلتھ انسٹیٹیویٹ (این آئی ایچ) کے ذرائع کا کہنا ہے کہ ملک میں کورونا کا پھیلاو روکنے کے لیے اہم فیصلے کیے گئے ہیں، آئندہ دو ہفتوں میں تعلیمی اداروں میں کورونا ٹیسٹنگ شروع کی جائے گی۔کورونا ٹیسٹنگ میں زیادہ شرح والے تعلیمی ادارے ایک ہفتہ بند رکھے جائیں گے، اور 12 سال سے زائد عمر کے طلبہ کی کرونا ویکسینیشن لازمی ہوگی، جس کا آغاز یکم فروری سے ہوگا۔

 تعلیمی اداروں میں 100 فی صد طلبہ کی ویکسینیشن یقینی بنائی جائے گی اور ویکسینیشن سے استثنی کے لیے طلبہ کو میڈیکل سرٹیفکیٹ پیش کرنا ہوگا، جبکہ ویکسینیشن نہ کرانے والے طلبہ تعلیمی سہولتوں سے محروم رہیں گے۔واضح رہے کہ پاکستان میں کورونا مریضوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے، کراچی یومیہ شرح میں بدستور سرفہرست ہے، کراچی میں کرونا مثبت آنے کی شرح تقریبا 39 فی صد ہو گئی ہے، گوجرانوالہ میں شرح 15، حیدر آباد میں 14، لاہور میں تقریبا 13 فی صد،اسلام آباد میں نو، راولپنڈی میں  سات  اعشاریہ  چھ اور پشاور میں  سات  اعشاریہ 24 فی صد رہی۔این سی او سی کے مطابق سندھ میں شرح ساڑھے 18 فی صد، پنجاب میں پانچ  ، آزاد کشمیر میں تین، بلوچستان میں ڈھائی فی صد رہی، جب کہ ملک بھر میں مجموعی طور پر کرونا مثبت آنے کی شرح ساڑھے نو   فی صد ہو گئی ہے۔

مزید :

کورونا وائرس -