پاکستان حق خودارادیت کے حصول تک کشمیر یوں کی حمایت جاری رکھے گا:وزیراعظم پرویز اشرف

پاکستان حق خودارادیت کے حصول تک کشمیر یوں کی حمایت جاری رکھے گا:وزیراعظم ...

  

آٹھ مقام(ثناءنیوز+ آن لائن)وزیر اعظم پاکستان راجہ پرویز اشرف نے کہا ہے کہ پاکستان حق خودارادیت کے حصول تک کشمیریوں کی سیاسی،سفارتی، اخلاقی حمایت جاری رکھے گا۔ پاکستان بھارت سے اچھے تعلقات اور بات چیت کے ذریعے تنازعات کا حل چاہتا ہے بات چیت کا عمل بحال کر دےا گیا ہے وزیر اعظم بدھ کے روز وادی نیلم میں ایک بڑے عوام جلسے سے خطاب کر رہے تھے ۔اس موقع پر صدر آزاد کشمیر سردار یعقوب خان،وزیر اعظم چودھری مجید ،وزراءحکومت نے بھی خطاب کیا۔وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ کشمیر کا مسئلہ کشمیریوں کی خواہشات اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے تحت حل ہونا چاہیے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ ہمیں جمہوریت کے لیے کسی سرٹیفکیٹ کی ضرورت نہیں ہے ہم جمہوریت کے لیے جان دے سکتے ہیں ہم نے قربانیاں دی ہیں۔اتحادی حکومت نے پانچواں بجٹ ددےے دیا ہے منتخب حکومت کا بڑا کارنامہ ہے حکومت اور اس کی اتحادی جماعتیں ملک میں صاف و شفاف غیر جانبدارانہ انتخابات چاہتی ہیں۔اس کے لیے چیف الیکشن کمشنر کا تقرر کر دیا گیا ہے ہم چور دروازے سے نہیں عوام کے ووٹ کی طاقت سے اقتدار میں آئے ہیں۔ پی پی پی کی حکومت صاف وشفاف انتخابات کرائے گی۔ہم عوام کے مینڈیٹ کو تسلیم کریں گے۔انتخابات میں گھوڑا بھی حاضر ہے اور میدان بھی۔ لوگ ووٹ کے ذریعے فیصلہ کریں گے۔وزیراعظم نے کہا کہ ہم نے ترقیاتی کام کروائئے ہیں۔صوبوں کو خود مختاری دی مزدور کی تنخواہ بڑھائی ہے ماضی میں گندم باہر کے منگواتے تھے آج گندم کے گودام بھرے ہوئے ہیں یہ ہمارا کارنامہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ بجلی کی کمی ہے مسئلہ موجود ہے کوشش ہو رہی ہے کہ لوڈ شیڈنگ کا مسئلہ ختم ہو۔ بتدریج مسئلہ حل ہو رہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ آزاد کشمیر میں دس ہزار مےگاواٹ تک کے ہائیڈرو پاور کے منصوبے لگائے جائیں کوئی پابندی نہیں ہے صرف آزاد کشمیر میں نہیں کسی صوبے پر بجلی پیدا کرنے پر پابندی نہیں ہے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ لائن آف کنٹرول کے پار بسنے والے کشمیری بھائیوں کی حمایت جاری رکھیں گے ہم کشمیری بھائیوں کی سیاسی، سفارتی ،اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے۔اقوام متحدہ کی قراردادوں کے عین مطابق مسئلہ کشمیر حل کیا جائے انہوںنے کہا کہ سعودی عرب کے دورے کے موقع پر سعودی حکام نے خواہش کااظہار کیا کہ پاکستان کے پڑوسیوں کے ساتھ اچھے تعلقات قام ہوں میں نے ان سے کہا کہ بھارت اور افغانستان سے اچھے تعلقات چاہتے ہیں۔ وزیراعظم نے کہاکہ میں عملی کام پر یقین رکھتا ہوں آٹھ مقام پر سڑک بنائی جائے گی حکومت آزاد کشمیر منصوبہ کی منظوری کے لئے اسلام آباد سمری بھجوائے میں خود اس سڑک کا افتتاح کروں گا۔ نیلم ویلی میں جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے راجہ پرویز اشر ف نے کہا کہ حکومت نے وادی نیلم کے عوام سے آزاد کشمیر میں موبائل سروس کا وعدہ کیا تھا اور ہم نے اس وعدے کو پورا کیا ۔کیونکہ آزاد کشمیر کی عوام نے ہمیشہ ذوالفقار علی بھٹو کا ساتھ دیا ۔انہوں نے کہا کہ ہمارے دشمن سمجھتے تھے کہ جب ذوالفقار علی بھٹو نہیں رہےں گے تو پیپلز پارٹی ختم ہو جائے گی پیپلز پارٹی عظیم جماعت ہے ،ہماری عظیم قائد بے نظیر بھٹو نے اپنی جماعت کو سنبھالا ۔ وزیر اعظم نے کہا کہ پیپلز پارٹی کی حکومت نے اپنے اتحادیوں کے ساتھ مل کر پانچواں بجٹ پیش کر دیا اور یہ تاریخ میں پہلی مرتبہ ہوا ہے کہ عوام کی منتخب کردہ حکومت سے پانچواں بجٹ پیش کیا اور مجھے اس بات پر فخر ہے وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ آزاد کشمیر میں زلزلہ سیلاب جیسی آفات آئی لیکن یہاں کے عوام نے اپنی مدد آپ کے تحت کام کیا جس پر میں عوام کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں۔

مزید :

صفحہ اول -