عمران کی دعوت پر جنوبی وزیر ستان جانے کو تیار ہیں، منور حسن

عمران کی دعوت پر جنوبی وزیر ستان جانے کو تیار ہیں، منور حسن

  

 اسلام آباد(ثناءنیوز ) امیر جماعت اسلامی سید منور حسن نے کہا ہے کہ اگر عمران خان 23 ستمبر کو شمالی وزیرستان جانے کی دعوت دیں گے تو ہم ان کے ساتھ ضرور جائیں گے۔ ایک نجی ٹی وی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اگرچہ ہماری دعوت کے باوجود عمران خان نے نیٹو سپلائی بحالی کے خلاف ہماری احتجاجی ریلیوں میں شرکت نہیں کی مگر ہم اس اہم ایشو پر ان کے ساتھ شمالی وزیرستان جانے کو تیار ہیں۔ سید منور حسن نے کہا کہ رمضان المبارک کے دوران ہماری جاری تحریک کی سر گرمیوں میں نرمی ضرور آ سکتی ہے تاہم شدید گرمی میں ریلیاں تو نہ نکالی جا سکیں مگر لوگوں کو ایجوکیٹ کرنا اور حکومت پر دباﺅ بڑھانے کا کا کام جاری رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ نیٹو سپلائی کے پچھلے تین دن سے کنٹینرز رکے ہوئے تھے میں نہیں سمجھتا کہ رمضان میں لوگ سپلائی جاری رکھنے دیں گے کیونکہ لوگ بہت مشتعل ہیں ہم پر امن لوگ ہیں قانون کی پاسداری کرتے ہیں مگر اس کا یہ ہرگز مطلب نہیں کہ ہم قومی مفاد کو نظر انداز کر سکتے ہیں۔ لوگ بپھر ہوئے ہیں سارا کام از خود بھی کر نے کو تیار ہیں صرف اشاروں کی دیر ہے تاہم ہمیں قومی مفادات میں اس بات کا بھی لحاظ رکھنا چاہیے کہ لوگ قانون کے دائرے میں رہ کر کام کریں۔ نیٹو سپلائی کی بحالی کے حکومتی فیصلے کے بارے میں سید منور حسن نے کہا کہ این آر او کی حکومت سے بہتر فیصلوں کی توقع نہیں کی جا سکتی یہ غلامانہ امریکہ کی انجمن ہے جو اس وقت پاکستان میں برسر اقتدار ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -