وہ چیزیں جو کبھی بھی مائیکرو ویو میں گرم نہیں کرنی چاہئیں

وہ چیزیں جو کبھی بھی مائیکرو ویو میں گرم نہیں کرنی چاہئیں
وہ چیزیں جو کبھی بھی مائیکرو ویو میں گرم نہیں کرنی چاہئیں

  

کراچی(نیوزڈیسک)مائیکروویو ایک ایسے سہولت ہے جس میں کھانا فوراًگرم کیا جاسکتا ہے لیکن کچھ اشیاءایسی بھی ہیں جنہیں مائیکروویو میں ہرگز گرم نہیں کرناچاہیے۔آئیے آپ کو کچھ ایسی اشیا کے بارے میں بتاتے ہیں۔

مزیدپڑھیں:عرب ممالک میں انتہائی پرکشش نوکریوں کے مواقع

ابلا ہواانڈا

اگر آپ ایک مکمل ابلے ہوئے انڈے کو مائیکروویومیں گرم کرنے کی کوشش کریں گے تو اس میں بھاپ پیدا ہوگی جسے نکلنے کا کوئی راستہ نہ ملنے پریہ دھماکے سے پھٹ جائے گا۔

فروزن گوشت

اگر آپ جمے ہوئے گوشت کو مائیکروویو کریں گے تو یہ کہیں سے مکمل پک جائے گا اور کہیں سے گوشت جما ہوا رہے گا جس کی وجہ سے پکانے کے دوران یہ اچھا نہیں بنے گا اور ساتھ ہی پیٹ میں بیکٹیریا جانے کے امکانات بڑھ جائیں گے۔

ماں کا دودھ

تحقیق میں یہ بات ثابت ہوئی ہے کہ مائیکروویو میں ماں کا دودھ گرم کرنے سے اس میں کئی مفید بیکٹیریا ختم ہوجاتے ہیں اور یہ فائدہ مند ہونے کی بجائے بچوں کو نقصان پہنچاتا ہے۔

پلاسٹک کنٹینر

ہم اکثر اپنے گھروں میں کھانے کو پلاسٹک کنٹینر میں رکھ کر فریز کردیتے ہیں اور جب یہ استعمال کرنا ہوتو فریج سے نکال کر اسے مائیکروویو میں گرم کر لیتے ہیں لیکن یہ ایک خطرناک عادت ہے۔پلاسٹک کے برتنوں میں ایک زہریلا مادہ ایسٹروجن ہوتا ہے جو مائیکروویو میں گرم ہونے پر کھانے میں شامل ہوجاتا ہے اور پھر ہمارے پیٹ میں چلا جاتا ہے جس سے کینسر اور دیگر خطرناک بیماریا ں جنم لیتی ہیں۔

فوم کے کنٹینر

آج کل ہوم سروس میں کھانے ایسے کنٹینر میں گھروں کو بھجوائے جاتے ہیں جو ہم مائیکروویو میں گرم کرتے ہیں۔لہذا ضروری ہے کہ آپ اس عادت سے چھٹکارا حاصل کریں۔

چینی کی پلیٹیں

امریکی ادارہ صحت کے مطابق رنگ برنگی چینی کی پلیٹوں میں کھانا گرم کرنا اچھی بات نہیں اور اگر آپ کو ضرورت کے تحت ان میں کھانا گرم کرنا پڑے تو ایک سادہ پلیٹ کا استعمال کریں۔

مزیدپڑھیں:فیس بک کے شوقین افراد کو سائنسدانوں نے زبردست خوشخبری سنا دی

پانی کے کپ

پانی کے کپوں کو مائیکروویو میں رکھ کر گرم نہیں کرنا چاہیے۔اگر ایسا کریں تو یہ پانی بہت زیادہ گرم ہونے کی وجہ سے آپ کے لئے انتہائی خطرناک ثابت ہوسکتا ہے۔لہذا آپ کو چاہیے کہ پانی صرف اتنا ہی گرم کریں کہ باہر نکال کر استعمال کرتے ہوئے آپ کے اوپر چھلک نہ جائے۔

اسی طرح خالی مائیکروویو کو بھی نہیں چلانا چاہیے کہ اس میں آگ لگنے کا قوی اندیشہ ہوتا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس