لڑکی کو ذبح کرنے والا ملزم 24 گھنٹوں میں گرفتار

لڑکی کو ذبح کرنے والا ملزم 24 گھنٹوں میں گرفتار

مٹہ(نمائندہ پاکستان ) ایس ایچ او پولیس تھانہ کالاکوٹ سہیل خان نے کہا ہے ۔ک سخرہ کولتے میں شادی شدہ لڑکی کو ذبح کرنے والے ملزم کو 24گھنٹوں کی اندر اندر گر فتار کرکے الہء قتل اور ملزم کی خون الودہ کپڑے برامد کرلی ہے ۔اس اندھے قتل کو عوام کی تعاون اور سی ڈی ارکی مدد سے حل کردیا ہے ۔ عوام اپنا تعاون جاری رکھیں ۔پولیس کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز تھانہ کالاکوٹ میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر تفتشی افسر ظاہر شاہ ۔پاکستان مسلم لیگ کے مقامی رہنماء شیرین محمد سواتی اور ملزم جمیل اللہ بھی موجود تھے ۔انہوں نے کہا کہ کہ 14جولائی کو سخرہ کولتے میں پولیس کو اطلاعم ملی کہ وہاں پر ایک ذبح شدہ خاتون کی لاش پڑی ہے ۔جنکو پولیس نے تحویل میں لیکر نامعلوم ملزمان کی تلاش شروع کی ۔اور کافی کوششوں کی بعد سی ڈی ار کے ذریعے ملزم کو گرفتار کرکے ملزم سے الہء قتل اور ملزم کی خون الودہ کپڑے برامد کی ۔اور ملزم سے مقتولہ کی موبائل بھی برامد کرلی ۔انہوں نے کہا ۔کہ وجہ قتل مقتولہ کی گلے میں پیتل کا ہار تھا ۔جو ملزم سونے کی سمجھ کر لینے کیلئے یہ قدم اٹھایا ۔جو پولیس نے برامد کرلی ہے ۔اور واقعی پیتل کی ہے ۔اس موقع پر موجود ملزم نے تمام جرم کا خود بھی تفصیلات بیان کی ۔اور کہا کہ انہوں نے یہ کام کیا ہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر