قندیل بلوچ کے قاتل بھائی کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوانے حکم

قندیل بلوچ کے قاتل بھائی کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوانے حکم

ملتان(خبر نگار خصوصی)جوڈیشل مجسٹریٹ ملتان سرفراز انجم نے قندیل بلوچ کے قاتل بھائی کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل (بقیہ نمبر30صفحہ12پر )

بھجوانے کاحکم دیاہے۔ ملز م نے عدالت میں اعتراف جرم بھی کیا۔فاضل عدالت میں پولیس تھانہ مظفرآباد کے مطابق 16 جولائی کو محمد عظیم نے مقدمہ درج کرایا کہ اس کی بیٹی قندیل بلوچ شوبز میں کام کرتی ہے اور اس کا بھائی وسیم اس کو شوبز میں کام کرنے سے روکتا تھا جبکہ قندیل بلوچ عیدالفطر پر کراچی سے آکر ان کے ساتھ رہ رہی تھی اور 14 جولائی کو وسیم گھر آیاجو صبح موجود نہیں تھا اور گھر کا تالا بھی اندر سے کھلا ہواتھا نیز قندیل بلوچ کے نہ جاگنے پر دیکھاتو اس کی زبان باہر آئی ہوئی تھی اور گلے پر نشانات تھیاور اس کے بیٹے وسیم نے حساس ادارے میں ملازم اپنے بھائی محمد اسلم شاہین کے کہنے پر قندیل بلوچ کو قتل کیا ہے۔دریں اثناء فاضل عدالت کے استفسار پر ملزم نے بتایا کہ اس نے نشہ آور گولیاں پیس کردودھ میں ملا نے کے بعد پلا دیا تھااور بہن کے بے ہوش ہونے پر گلادباکر قتل کردیا۔پولیس کے مطابق ملزم سے مقتولہ کے موبائل فون اور رقم برآمد کر لی گئی ہے۔برآمدگی مکمل ہونے پر ملزم کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوانے کا حکم دیا گیا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر