رجسٹریشن نہ کروانے والے مدارس کام جاری نہیں رکھ سکیں گے،شفقت محمود 

   رجسٹریشن نہ کروانے والے مدارس کام جاری نہیں رکھ سکیں گے،شفقت محمود 

  



اسلام آباد (آئی این پی)وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا ہے کہ تمام مدارس رجسٹریشن کروانے کے پابند ہوں گے جب کہ رجسٹریشن نہ کروانے والے مدارس کام جاری نہیں رکھ سکیں گے،مدارس کی رجسٹریشن کیلئے کام جاری ہے، وزارت تعلیم مدارس رجسٹر کرنے کے لیے ریجنل دفاتر قائم کر رہی ہے 12ریجنل آفس کے ذریعے رجسٹریشن کا عمل آگے بڑھایا جائے گا، میٹرک اور ایف اے کے مضامین مدارس میں پڑھائے جائیں گے، لازمی مضامین کا امتحان فیڈرل بورڈ لے گا اور فیڈرل بورڈ مدارس کے بچوں کو اسناد دے گا البتہ وفاق المدارس خودمختار ہوں گے اوراپنی پالیسی کے مطابق تعلیم چلائیں گے، مدارس کو کوئی ایسی فنڈنگ باہر سے نہیں ہوتی جس پر تشویش ہو، ہم چاہتے ہیں مدارس کو جو فنڈنگ بھی ہو بینکوں کے ذریعے ہو بینک اکانٹ کھولنے میں مدارس کی مدد کریں گے، آئندہ تمام ٹرانزیکشن بینکوں کے ذریعے ہوں گی،جب کہ نجی سکولوں، مدارس کی تنظیموں کے ساتھ رابطے میں ہیں اور تعلیمی نصاب کیلئے کاوشوں پر بڑی پیش رفت ہوئی ہے تاہم وفاق المدارس کے کچھ شقوں پر بات ہوئی اور کچھ پر بات رہ گئی تھی، تمام متعلقہ اداروں اور وزارتوں نے مدارس کی انتظامیہ سے مذاکرات کئے، مدارس سے متعلق اصلاحاتی اقدامات علمائے کرام کی مشاورت سے کیے گئے ہیں،ہم مدارس کے اندرونی معاملات میں مداخلت نہیں کر رہے، زیادہ تر مدارس کا تعلیمی نظام بہت بہتر ہے۔ ابھی تک کے مذاکرات کے لیے نیا ایکٹ پاس کرنے کی ضرورت نہیں، اگر ضرورت ہوئی تو نیا ایکٹ اسمبلی میں لے کر جائیں گے۔جمعرات کو پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے  وفاقی وزیر تعلیم  شفقت محمود نے کہا کہ ہماری پیشرفت اور کاوش تھی کہ ہم ملک میں یکساں تعلیمی نظام لے کر آئیں، اس سلسلے میں ہم نے مختلف اسٹیک ہولڈرز سے مذاکرات بھی کئے، ہماری آخری ملاقات وفاق المدارس کے ساتھ ہوئی جس میں کچھ چیزوں پر اتفاق کیا گیا، یہ بہت ہی ایک اہم پیشرفت ہے۔

شفقت محمود 

مزید : صفحہ آخر


loading...