حکومتی ناکامی اور نااہلی کا سارا نزلہ اپوزیشن پر گر رہا ہے، نئے پاکستان میں کہاں ہے شفاف احتساب؟ شہباز شریف 

  حکومتی ناکامی اور نااہلی کا سارا نزلہ اپوزیشن پر گر رہا ہے، نئے پاکستان میں ...

  



لاہور(جنرل رپورٹر)مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کا کہنا ہے کہ حکومت کی ناکامی اور نااہلی کا سارا ملبہ ن لیگ پر گر رہا ہے۔مسلم لیگ ن کے رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے شہباز شریف نے کہا کہ نیب کی ملی بھگت سے ن لیگ پر آج پھر وار کیا گیا اور بھونڈے طریقے سے شاہد خاقان عباسی کو ٹھوکر نیاز بیگ سے گرفتار کیا گیا۔شہباز شریف نے کہا کہ شاہدخاقان نے کہا کہ مجھے کوئی پریشانی نہیں ہے، آرڈر دکھائیں اور گرفتار کر لیں لیکن وارنٹ گرفتاری کے مطالبے پر نیب آفیشلز ایک دوسرے کا منہ دیکھنے لگے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان ان اقدامات سے عوام کی توجہ اصل مسائل سے ہٹانا چاہتے ہیں، عمران خان نیازی نے 11 ماہ میں ملکی معیشت کا جنازہ نکال دیا، عمران تباہ شدہ معیشت کے جنازے کو گرفتاریوں سے چھپانا چاہتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ گیس کی لوڈشیڈنگ ختم کرنے میں شاہد خاقان عباسی کا کلیدی کردار ہے، بجلی اور گیس کے آنے سے کاروبار میں اضافہ ہوا اور روزگار بڑھا، نواز شریف اور ان کی ٹیم پر بھی دباؤ تھا لیکن گیس کی قیمتیں نہیں بڑھائیں کیونکہ نوازشریف کوملک کے غریب عوام کادکھ تھا۔صدر مسلم لیگ نے کہا کہ نواز شریف کے دور میں آئی ایم ایف کی ڈکٹیشن نہیں لی گئی، شاہد خاقان عباسی کا قصور کیا ہے کہ وہ نوازشریف کا وفادار ساتھی ہے۔ان کا کہنا ہے کہ احتساب ہے تو احتساب ہے کہاں، کہاں ہے شفاف احتساب نئے پاکستان میں؟ احتساب کے نام پر یہ ن لیگ کے خلاف سیاسی انتقام کیا جا رہا ہے، احتساب یا تو ن لیگ کا کیا جا رہا ہے یا پھر پیپلزپارٹی کا۔تاجروں کی ہڑتال کے حوالے سے بات کرتے ہوئے شہباز شریف نے کہا کہ ہم نے اس لیے ہڑتال میں شمولیت نہیں کی کہ حکومت کو پتا چلے اس میں سیاسی آمیزش نہیں، ہڑتال میں اس لیے بھی شامل نہیں ہوئے تاکہ حکومت جان سکے یہ تاجر اور صنعتکار ہیں جو ہڑتال پر مجبور ہوئے ہیں۔وزیراعظم کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے شہباز شریف نے کہا کہ آپ نے پاکستان کو دنیا بھر میں بدنام کر دیا، کون یہاں سرمایہ کاری کرے گا۔شہباز شریف نے کہا کہ عمران خان ان تمام حالات کے باوجود یہ کہتے ہیں اس کو نہیں چھوڑوں گا، یہ چور ہے، وہ چور ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی ناکامی اور نااہلی کا سارا نزلہ ن لیگ پر گر رہا ہے۔ میاں شہباز شریف نے کہا ہے کہ عمران خان اور نیب کی ملی بھگت سے مسلم لیگ (ن) پر ایک اور وار کردیا گیا، یہ معیشت کے جنازے کو گرفتاریوں کے پیچھے چھپانا چاہتے ہیں، شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری کی شدید مذمت کرتے ہیں، ایسے اوچھے ہتھکنڈوں سے ہمارے حوصلے پست نہیں کیے جاسکتے۔ شہباز شریف نے شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری کو وزیراعظم عمران خان اور نیب کی ملی بھگت قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ انھیں یہ سودا مہنگا پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ نیب کے ادارے کو سیاسی انتقام کیلئے استعمال کیا جارہا ہے، نیب اور عمران نیازی کی ملی بھگت سے مسلم لیگ (ن) پر وار ہوا ہے جبکہ نیب عمران نیازی کے ہاتھ میں آلہ کار بنا ہوا ہے۔ شہباز شریف نے کہا کہ سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے وارنٹ گرفتاری کا پوچھا تو افسر ایک دوسرے کا منہ تکنے لگے، ڈی جی نیب نے انہیں واٹس ایپ میسج دکھایا، شاہد خاقان عباسی نے ڈی جی نیب سے کہا وارنٹ آرڈر کہاں ہے؟ جس پر انہیں فوٹو کاپی دکھائی گئی۔انہوں نے کہا کہ احتساب کے نام پر یہ (ن) لیگ کے خلاف سیاسی انتقام ہے، نیب کے عقوبت خانوں میں ساری (ن) لیگ کی قیادت پڑی ہے، غصے، ناکامی، نااہلی کا سارا نزلہ (ن) لیگ پر گر رہا ہے، جنھوں نے مسائل حل کیے آج وہ انتقام کا نشانہ بن رہے ہیں، ان اقدامات سے ملک کی جگ ہنسائی ہوتی ہے اور اپوزیشن کو ننگی گالیاں دینے والے کو وفاقی وزیر بنا دیا گیا۔ شہباز شریف نے مزید کہا کہ اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ پاکستانی معیشت کا بیڑا غرق کر دیا گیا، ڈالر بڑھنے سے آج قرضوں میں کھربوں روپے کا اضافہ ہو چکا ہے، عوام پر ٹیکس کا کلہاڑا چلایا گیا، غریب کیلئے جینا مشکل ہو گیا ہے، کہاں سے مہنگی روٹی لائے، 15 روپے کی روٹی ہو تو خاندان کا کھانا کہاں تک جائے گا، جو ادویات ہمارے دور میں مفت ملتی تھیں آج ناپید ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم سے غلطیاں ہوئی ہوں گی، ہم بھی انسان ہیں لیکن خدا کی قسم کھا کر کہتا ہوں ایک طالبعلم، مریض، عوام کی خدمت کی، ہمارے منصوبے عمران خان کو سونے نہیں دیتے، عمران خان مکمل طور پر ناکام، ضدی، غصے سے بھرا ہوا وزیراعظم ہے، قوم عمران خان سے حساب لے گی۔

شہباز شریف

مزید : صفحہ اول


loading...