ماسک پہننے پر امریکی صدر اور ڈاکٹر فاؤچی ایک مرتبہ پھر آمنے سامنے

 ماسک پہننے پر امریکی صدر اور ڈاکٹر فاؤچی ایک مرتبہ پھر آمنے سامنے

  

واشنگٹن(آئی این پی)امریکی صدر ٹرمپ اور نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف الرجی اینڈ انفیکشیس ڈیزیزز کے ڈائریکٹر ڈاکٹر انتھونی فاؤچی کورونا سے متعلق ایک مرتبہ پھر آمنے سامنے آ گئے، امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے طبی ماہرین سے کہا ہے کہ امریکیوں کو کورونا وائرس کا پھیلاؤ روکنے کیلئے ماسک پہننے کا حکم نہ دیں، امریکیوں کی آزادی سلب نہیں کرنی چاہئے،دوسری جانب ڈاکٹر فاؤ چی کا کہنا ہے کہ ریاست اور مقامی حکمرانوں کو عوام کو زبردستی ماسک پہننے کا حکم دینا چاہیے۔بین الاقوامی میڈیا کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے طبی ماہرین سے کہا ہے کہ امریکیوں کو کورونا وائرس کا پھیلا ؤروکنے کیلئے ماسک پہننے کا حکم نہ دیں۔امریکی نیوز چینل فوکس کو انٹرویو دیتے ہوئے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ وہ امریکہ میں عوام کیلئے ماسک کو لازمی پہننے کے حکم کیخلاف ہیں کیونکہ لوگوں کیلئے کچھ تو آزادی ہونی چاہیے۔ڈونلڈ ٹرمپ کا یہ بیان ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب امریکہ کے نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف الرجی اینڈ انفیکشیس ڈیزیزز کے ڈائریکٹر ڈاکٹر انتھونی فاؤچی نے کچھ روز قبل یہ کہا ہے کہ ریاست اور مقامی حکمرانوں کو عوام کو زبردستی ماسک پہننے کا حکم دینا چاہیے۔ڈاکٹر فاچی کا کہنا تھا کہ ماسک کورونا وائرس سے محفوظ رہنے کے لیے انتہائی اہم ہے اس لیے ہم سب کو استعمال کرنا چاہیے۔تاہم اس صورتحال میں امریکی عوام کا ماسک پہننا سیاسی شکل اختیار کرچکا ہے۔جب کہ کچھ مقامی حکام نے تو شہریوں پر ماسک پہننا ذاتی انتخاب کے بجائے لازمی شرط قرار دے دی ہے۔

ماسک پہننے

مزید :

صفحہ اول -