کورونا وباء پر 70ممالک کو 25ارب ڈالر دیئے، شفافیت، احتساب بھی ضروری، آئی ایم ایف

      کورونا وباء پر 70ممالک کو 25ارب ڈالر دیئے، شفافیت، احتساب بھی ضروری، آئی ...

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے کہاہے کہ کورونا وائرس کی عالمگیروباسے نمٹنے کیلئے اقدامات میں حکومتوں کو احتساب اورشفافیت کے عمل کو پس پشت نہیں ڈالنا چاہیے۔اپنے ایک جاری پیغام میں آئی ایم ایف نے کہاہے کہ بین الاقوامی مالیاتی فنڈ نے وباء کے اثرات سے نمٹنے کیلئے 70 سے زائد ممالک کو ہنگامی بنیادوں پر25ارب ڈالر کی مالی معاونت فراہم کی ہے۔آئی ایم ایف کا تمام حکومتوں کیلئے یہی پیغام ہے کہ وہ بحران کے دورمیں ضرورت کے مطابق اخراجات کرے لیکن اخراجات دانش مندانہ طریقے سے کئے جائیں اوراس کی رسیدیں بھی رکھی جائیں، اس عرصہ میں ہم احتساب کے عمل کو پس پشت نہیں ڈال سکتے۔بدعنوانی ایک ایسی تباہ کن طاقت ہے جو معاشرے کو غریب اورکمزورطبقات کو سب سے زیادہ متاثر کررہی ہے۔ بین الاقوامی مالیاتی فنڈ نے بدعنوانی کے خلاف اقدامات میں حکومتوں کے ساتھ تعاون کا سلسلہ جاری رکھا ہے۔حکومتی خریداری معاہدوں کی آن لائن اشاعت، آزادانہ آڈٹ اور اینٹی کرپشن وانسداد منی لانڈرنگ کی حوصلہ شکنی کیلئے حکومتوں کے ساتھ مل کرکام کیا جارہاہے اوراس بارے اقدامات کیلئے حوصلہ افزائی بھی کی جاتی ہے۔پیغام میں کہاگیاہے کہ بدعنوانی کرنے والے اپنے مقاصد سے پیچھے نہیں ہٹتے اس صورتحال میں حکومتوں، سول سوسائٹی، بین الاقوامی تنظیموں اورنجی شعبہ کو مل کراقدامات کرنا ہوں گے۔

آئی ایم ایف

مزید :

صفحہ اول -