صدام حسین کا دور حکومت، عراق اور کویت کی جنگ کے دوران درجنوں قیدیوں کو موت کے گھاٹ اتارنے والے شخص نے برطانیہ میں مقدمہ جیت لیا

صدام حسین کا دور حکومت، عراق اور کویت کی جنگ کے دوران درجنوں قیدیوں کو موت کے ...
صدام حسین کا دور حکومت، عراق اور کویت کی جنگ کے دوران درجنوں قیدیوں کو موت کے گھاٹ اتارنے والے شخص نے برطانیہ میں مقدمہ جیت لیا

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) عراق کے سابق صدر صدام حسین کے دور میں کویت کے ساتھ جنگ میں قید ہونے والے 35 قیدیوں کو موت کے گھاٹ اتارنے والے شخص نے برطانیہ میں قیام کا مقدمہ جیت لیا۔ دی سن کے مطابق قانونی وجوہات کی بناءپر اس 55سالہ شخص کا نام منظرعام پر نہیں لایا جا سکتا جو 2001ءمیں برطانیہ گیا جہاں سے اسے ملک بدر کرنے کا فیصلہ کیا گیا مگر اس نے برطانوی عدالت سے رجوع کر لیا۔ اس نے انسانی حقوق کی بنیاد پر اپنا مقدمہ لڑا۔ 20سال طویل قانونی جنگ کے بعد اب عدالت نے اس کے حق میں فیصلہ دیتے ہوئے اسے برطانیہ میں رہنے کی اجازت دے دی ہے۔

رپورٹ کے مطابق اس شخص پر جنگی جرائم ثابت ہو چکے ہیں۔ 1990ءمیں کویت کے ساتھ ہونے والی جنگ میں قید ہونے والے 35جنگی قیدیوں کو اس آدمی نے موت کے گھاٹ اتارا تھا۔ عراق کے کویت پر کیے گئے اس حملے کی وجہ سے پہلی خلیجی جنگ چھڑی تھی۔ اس حملے میں کل 440کویتی موت کے گھاٹ اتارے گئے تھے۔ ان میں سے 35کی ہلاکت کا براہ راست الزام اس آدمی پر ثابت ہو چکا تھا۔ برطانوی عدالتوں میں اس کی درخواستیں 2003ء، 2007ءاور 2014ءمیں مسترد ہوئی اور اسے ملک بدر کرنے کا فیصلہ سنایا گیا مگر ہر بار وہ اس فیصلے کو چیلنج کردیتا اور بالآخر اس نے انسانی حقوق ایکٹ کے تحت ایک اپیل دائر کر دی۔

مزید :

برطانیہ -