ملتان، زیر تعمیر عجائب گھر کا منصوبہ ادھورا، لاگت ڈبل

ملتان، زیر تعمیر عجائب گھر کا منصوبہ ادھورا، لاگت ڈبل

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
ملتان(سٹی رپورٹر)شہر اولیا میں زیر تعمیر عجائب گھر کا منصوبہ تاحال مکمل نہ ہو سکا، عجائب گھر پر سست روی سے کام کی وجہ سے منصوبے کی لاگت میں اضافہ ، 8 کروڑ 60 لاکھ روپے کا منصوبہ 10 کروڑ روپے سے زائد کی لاگت سے مکمل ہونے کا امکان ہے، بار بار فنڈز کی عدم دستیابی کے باعث کام رکنے سے عجائب گھر کی عمارت کی تعمیر مقررہ وقت میں مکمل نہ ہونے کا امکان ہے ، تفصیلات کے مطابق شہر اولیا کی ہزاروں سال پرانی تاریخ اور نوادرات کو محفوظ کرنے کے لئے شہر اولیا میں عجائب گھر کا منصوبہ شروع کیا گیا تھا ، حضرت بہا الدین زکریا ملتانی کے دربار (بقیہ نمبر27صفحہ6پر )
سے ملحقہ محکمہ آثار قدیمہ کے دفتر کے ساتھ ہی 10 کنال پر میوزیم تیار کیا جا رہا ہے، میوزیم کی اسکیم کو 2021 کے بجٹ میں مختص کیا گیا جو کہ جون 2023 میں مکمل ہونا تھا، جس کی عمارت پر 8 کروڑ 60 لاکھ روپے خرچ ہونے تھے جبکہ یہ منصوبہ جون 2023 میں پایہ تکمیل کو پہنچنا تھا ، تاہم پنجاب حکومت کی تبدیلی اور فنڈز کی فراہمی میں تعطل کی وجہ سے اس منصوبے پر انتہائی سست روی سے کام جاری ہے اور یہ منصوبہ مقررہ وقت میں مکمل ہوتا دکھائی نہیں دے رہا ، محکمہ آثار قدیمہ حکام کے مطابق میٹریل مہنگا ہونے کی وجہ سے اس منصوبے کی لاگت میں تقریبا ڈیڑھ کروڑ روپے کے اضافے کا بھی امکان ہے، میوزیم کے اندر بنائے جانے والے شوکیس ، الماریاں اور دیگر کے لئے ٹینڈر بھی کئے گئے تھے تاہم مارکیٹ ریٹ سے کم ہونے کے باعث ٹینڈر میں کسی ٹھیکدار نے دلچسپی کا اظہار نہیں کیا، محکمہ بلڈنگ کے زیر اہتمام میوزیم کی تعمیر آخری مراحل میں داخل پہلے جبکہ میوزیم کے اندرونی حصے میں کام تاحال شروع نہیں ہو سکا ۔