سعودی عرب نے ایران کو وارننگ دیدی

سعودی عرب نے ایران کو وارننگ دیدی
سعودی عرب نے ایران کو وارننگ دیدی

  

دبئی (نیوز ڈیسک ) عراقی حکومت کے خلاف شرت پسند گروپ داعش (ISIS) کی حالیہ کا میابیوں کے بعد سعودی عرب اور ایران کے درمیان تناﺅ بڑھ گیا ہے اور ایران کی طرف سے عراقی حکومت کی حمایت کے بعد سعودی عرب نے بیان جاری کیا ہے کہ بیرونی طاقتیں عراق کے اندرونی معاملات میں مداخلت سے باز رہیں ۔سعودی وزیر خارجہ سعود الصیفل نے اگرچہ اپنے بیان میں کسی ملک کا نام نہیں لیا لیکن عراق کے معاملہ پر سعودی عرب اور ایران کے درمیان بڑھتے ہوئے اختلافات کی وجہ سے اس بیان کوایران کےلئے پیغام قرار دیا جا رہا ہے ۔

سعودی وزیر خارجہ کا یہ بیان ایران کے اُس بیان کے بعد آیا ہے جس میں کہا گیا تھا کہ ایران عراق میں واقع شیعہ مقدس مقامات کی شدت پسندوں کی یلغار سے بچانے میں تذیذب کا مظاہرہ نہیں کرے گا ۔مشرقِ وسطی کی اِن دو طاقتور ریاستوں کے درمیان بیانات کی جنگ سے ےہ اشاربھی ملتا ہے کہ باہمی ملاقات میں بہتری کی کوششوں کو فی الحال پس پشت ڈال دیا گیا ہے ۔

ایران ،عراقی وزیر اعظم نوری المالکی اور شامی صدربشار الاسد کی حکومتوں کی حمایت کرتا ہے جبکہ ان دونوں حکومتوں کو باغیوں اور شدت پسندوں کی طرف سے سخت خطرات لا حق ہیں۔دوسری طرف ا س سے پہلے عراقی وزیر اعظم سعودی عرب پر شدت پسندوں کی پشت پناہی کا الزام لگا چکے ہیں جبکہ سعودی عرب نے عراق کی بدامنی اور عد م استحکام کےلئے عراقی حکومت کی سنی مخالف پالیسیوں کو ذمہ دار قرار دیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -