موبائل صارفین کیلئے انتہائی تشویشنا ک خبر،جرمن ماہرین نے سنگین خطرے کے بارے میں خبر دار کر دیا

موبائل صارفین کیلئے انتہائی تشویشنا ک خبر،جرمن ماہرین نے سنگین خطرے کے بارے ...
موبائل صارفین کیلئے انتہائی تشویشنا ک خبر،جرمن ماہرین نے سنگین خطرے کے بارے میں خبر دار کر دیا

  

برلن(مانیٹرنگ ڈیسک)اینڈرائیڈ موبائل فونز کی ایپلی کیشنز ہیک ہونے سے صارفین بعض اوقات بہت بڑے نقصانات سے دوچار ہو جاتے ہیں، خاص طور پر مختلف بینکوں کی ایپلی کیشنز، جن کے ذریعے صارفین موبائل فون کے ذریعے اپنے بینک اکاﺅنٹ کو استعمال کرتے ہیں۔ ہیکر ان کی ایپلی کیشن ہیک کرکے ان کے بینک اکاﺅنٹ سے رقم بھی نکلوا سکتے ہیں۔ محققین کہتے ہیں کہ اینڈرائیڈ ایپلی کیشنز جس انداز میں آن لائن ڈیٹا سٹور کرتی ہیں اس سے صارفین کے پاس ورڈز، لوکیشن اور ایڈریس ہیکرز کے ہاتھ لگنے کا زیادہ احتمال ہوتا ہے۔

مزیدپڑھیں:انٹرنیٹ صارفین کیلئے زبر دست خوشخبری،انٹرنیٹ کمپنیوں کے بلیک میلنگ کے دن گنے گئے ،تاریخی منصوبے کا آغاز

جرمن محققین کی ٹیم کا کہنا ہے کہ انہوں نے غیر محفوظ ڈیٹا کی5کروڑ 60لاکھ آئٹمزپرتحقیق کی ہے، جن میں گیمز، سوشل نیٹ ورکس، میسجنگ، میڈیکل اور بینک ٹرانسفر ایپلی کیشنز شامل ہیں۔انہوں نے کہا کہ ساری خرابی ایپلی کیشنز کے آن لائن ڈیٹا بیس میں ڈیٹا محفوظ کرنے میں ہے۔تقریباً ہر ایپلی کیشن اس حوالے سے ہیکرز کے لیے آسان ہدف ہے۔ محققین کی ٹیم کے سربراہ ایرک بوڈن کا کہنا ہے کہ ایپلی کیشنز ایمازون ویب سروسز یا دیگر سٹور کو بیک اپ کے لیے استعمال کرتی ہیں جہاں صارف کا پاس ورڈ، ایڈریس اور اس کی لوکیشن بھی محفوظ ہو جاتی ہے۔ وہیں سے ہیکرز ڈیٹا چوری کرکے صارف کی ایپلی کیشن میں داخل ہو جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اینڈرائیڈ ایپلی کیشنز کی ان خرابی کی وجہ سے موبائل فون پر انٹرنیٹ استعمال کرنے والے افراد دیگر صارفین سے زیادہ غیر محفوظ ہیں۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -