طلبہ کاداخلہ فیسیں ہڑپ کرنے والے پرنسپل کے خلافسیشن کورٹ کے باہر مظاہرہ

طلبہ کاداخلہ فیسیں ہڑپ کرنے والے پرنسپل کے خلافسیشن کورٹ کے باہر مظاہرہ

  

لاہور(نامہ نگار)بی کام پارٹ ون کا داخلہ نہ بھجوانے اور مبینہ طور پر 2لاکھ سے زائدفیسیں خورد برد کرنے پر طلبہ کا کالج پرنسپل کے خلاف سیشن کورٹ کے باہر احتجاجی مظاہرہ،طلبہ کا کہنا ہے کہ بچوں کا سال ضائع کرنے والے پرنسپل کو معاف نہ کرنے مطالبہ ،ساندہ میں واقع ایج کالج سسٹم انٹرنیشنل میں زیر تعلیم طلبہ نے بی کام پارٹ ون کے لئے داخلہ فیس جمع کروائی لیکن کالج پرنسپل شوکت علی نے طالب علموں کی فیس بورڈ نہ بھجوائی جس کی وجہ سے طالب علم امتحان میں نہ بیٹھ سکے اور انکا سال ضائع ہو گیا۔ سینکڑوں طلبہ اور ان کے والدین ہاتھوں میں پلے کارڈ اٹھائے سیشن کورٹ پہنچ گئے جہاں انہوں نے پرنسپل کے خلاف نعرے بازی اور احتجاج کیا اور مطالبہ کیا کہ پرنسپل کو سزا دی جائے۔طلبہ کا کہنا تھا کہ انھوں نے باقاعدگی سے کلاسیں لیں تاکہ انکا داخلہ بھجوایا جا سکے مگر پرنسپل ان کی 2 لاکھ سے زائد کی رقم ہڑپ کر گیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -