’سیدھے ہوجاﺅ ورنہ۔۔۔‘ روسی صدر پیوٹن نے امریکہ اور یورپ کو اب تک کی سب سے خطرناک دھمکی دے دی، نیا خطرہ پیدا ہوگیا

’سیدھے ہوجاﺅ ورنہ۔۔۔‘ روسی صدر پیوٹن نے امریکہ اور یورپ کو اب تک کی سب سے ...
’سیدھے ہوجاﺅ ورنہ۔۔۔‘ روسی صدر پیوٹن نے امریکہ اور یورپ کو اب تک کی سب سے خطرناک دھمکی دے دی، نیا خطرہ پیدا ہوگیا

  

ماسکو (نیوز ڈیسک) امریکا کی قیادت میں مغربی ممالک نے کئی ماہ سے مشرقی یورپ میں افواج اور بھاری اسلحے کی تعیناتی شروع کر رکھی ہے جس کے جواب میں روس نے نہ صرف اپنی افواج کو یورپی سرحد پر جمع کرنا شروع کر دیا ہے بلکہ صدر پیوٹن نے امریکا اور اس کے حواریوں کو خوفناک نتائج کی دھمکی بھی دے دی ہے۔

اخبار ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق روسی صدر نے مشرقی یورپ اور بالٹک ریاستوں میں نیٹو افواج کے ہزاروں اہلکاورں کی تعیناتی پر امریکا اور اس کے اتحادیوں کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ اگر روس کے خلاف فوجی اتحاد کی یکطرفہ پالیسی جاری رہی تو اس کے خطرناک نتائج برآمد ہوں گے۔ انہوں نے وارننگ دی کہ دنیا ایک نئی سرد جنگ کی طرف سرک رہی ہے ، جبکہ اس سے پہلے مغربی انٹیلی جنس ایجنسیاں خبردار کر چکی ہیں کہ روس تیسری عالمی جنگ کیلئے تیار ی کر رہا ہے۔ روسی صدر نے سینٹ پیٹرز برگ انٹرنیشنل اکنامک فورم کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ کوئی بھی ایک اور سرد جنگ کا آغاز نہیں چاہتا ، روس تو یقینا نہیں چاہتا۔

پاک افغان سرحدی کشیدگی پر اظہار تشویش، افغانستان کی حمایت جاری رکھیں گے : امریکہ

واضح رہے کہ مشرقی یورپ کی سرحدوں پر حال ہی میں تعینات کی جانے والی روسی افواج کی وجہ سے امریکا اور اس کے اتحادی پہلے ہی سخت تشویش میں مبتلا ہیں۔ رواں ہفتے کے آغاز میں ایک سینئر امریکی دفاعی اہلکار نے خبردار کیا تھا کہ اگر اسی سال جنگ کا آغاز ہو گیا تو روس تین دن سے بھی کم وقت میں نیٹو افواج کو شکست سے دو چار کر دے گا۔

مزید : بین الاقوامی