ہسپتالوں کے ویسٹ سے پلاسٹک بنانے والی فیکٹری پکڑی گئی

ہسپتالوں کے ویسٹ سے پلاسٹک بنانے والی فیکٹری پکڑی گئی

لا ہور (جنر ل ر پو رٹر )شفیق آباد بند روڈ پر ہسپتال کے ویسٹ سے پلاسٹک دانہ بنانے والی فیکٹری پکڑی گئی۔ پلاسٹک دانہ سے بچوں کے فیڈرز سمیت دیگر اشیاء بنائی جاتی ہیں۔ پارلیمانی سیکرٹری صحت خواجہ عمران نذیراورچیئرمین پبلک فسیلیٹیشن کمیٹی محکمہ ماحولیات شہبازجٹ نے فیکٹری سربمہر کر کے مالک کیخلاف ایف آئی آر کی ہدایت کردی۔تفصیلا ت کے مطا بق محکمہ ماحولیات کی ٹیم نے شفیق آباد بندروڈ پرقائم فیکٹری پرچھاپہ مارا جہاں سے انسانی علاج معالجہ میں استعمال ہونے والی سرنجیں اور ہسپتالوں کا دیگرویسٹ برآمد ہوا۔ ہسپتال کے اس ویسٹ سے پلاسٹک دانہ بنایا جا رہا تھاجو بچوں کے فیڈرز اور گھریلو استعمال کے برتن بنانے میں استعمال ہوتا ہے۔خواجہ عمران نذیر نے کہا کہ اس بات کی تحقیقات کی جائیں گی کہ ہسپتال کا ویسٹ فیکٹری میں کیسے پہنچا انہوں نے بتایا کہ دیگر صوبوں سے بھی اس حوالے سے رابطے کیے جائیں گے تاکہ اس مکروہ دھندے میں ملوث عناصر کو بے نقاب کیا جا سکے۔ چیئرمین پبلک فسیلیٹیشن کمیٹی محکمہ ماحولیات شہباز جٹ کا کہنا تھا کہ فیکٹری مالک محمد یوسف کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ہسپتال ویسٹ سے پلاسٹک دانہ بنانے والی فیکٹری کو سربمہر کرنا خوش آئند ہے تاہم پکڑے جانے والے ملزم کی مدد سے یہ مکروہ دھندہ کرنے والے دیگر ملزمان تک بھی پہنچا جا سکتا ہے جن کیخلاف قانون کے مطابق سخت کارروائی ہونی چاہیے۔محکمہ ماحولیات کاشفیق آبادمیں فیکٹری پرچھاپہ

مزید : میٹروپولیٹن 1