ملک بھر میں عید الفطر مذہبی جوش و جذبے کے ساتھ منائی گئی

ملک بھر میں عید الفطر مذہبی جوش و جذبے کے ساتھ منائی گئی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


اسلام آباد‘ملتان(صباح نیوز‘سٹی رپورٹر) ملک بھر میں ہفتے کو مذہبی جوش و جذبے کے ساتھ عید الفطرمنائی گئی۔ ملک کے ہر چھوٹے بڑے شہر اور علاقے میں نماز عید کے اجتماعات(بقیہ نمبر5صفحہ12پر )
ہوئے جن میں لوگوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔وفاقی دارالحکومت اسلام آباد، کراچی، لاہور، پشاور اور کوئٹہ سمیت ملک کے مختلف شہروں میں سینکڑوں عیدگاہوں اور کھلے مقامات پر عید کے اجتماعات منعقد کیے گئے، نماز عید پر ملکی سلامتی، امت مسلمہ اور ملک و قوم کی ترقی و خوشحالی کیلئے خصوصی دعائیں مانگی گئیں۔وفاقی دارلحکومت میں عید نماز کا سب سے بڑا اجتماع فیصل مسجد میں ہواجہاں پر ہزاروں لوگوں نے عید نماز ادا کی ،صدر ممنون حسین نے کراچی میں، جب کہ سابق صدر آصف زرداری نواب شاہ میں عید کی نماز ادا کی، نگران وزیر اعظم ناصر الملک نے آبائی علاقے سوات کے بجائے اسلام آباد میں عید کی نماز ادا کی، نواز شریف نے اپنی علیل اہلیہ اور بچوں کے ساتھ لندن میں عید منا ئی ، تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے عید کی نماز بنی گالہ، بلاول زرداری نے نوڈیرو سابق صدر پرویز مشرف نے دبئی، یوسف رضا گیلانی نے ملتان اور چوہدری شجاعت نے گجرات میں عید منا ئی،چیف جسٹس میاں ثاقب نثار اور نگران وزیر اطلاعات بیرسٹر علی ظفر نے عید کی نماز لاہور میں، امیرجماعت اسلامی سراج الحق نماز نے منصورہ شیخ رشید اور چوہدری نثار علی خان نے راول پنڈی، ڈاکٹر طاہرالقادری نے لاہور فضل الرحمان نے آبائی شہر ڈیرہ اسماعیل خان، جب کہ آفتاب شیرپاؤ اور اسفندیار ولی عید نے اپنے علاقے چارسدہ میں عید کی نماز ادا کی۔شہباز شریف نے ماڈل ٹاون میں نماز عیدالفطر ادا کی، نماز عید کے موقع پر پاکستان کے لئے خصوصی دعائیں مانگی گئیں، جب کہ بیگم کلثوم نواز کی صحت کے لئے بھی خصوصی دعا کی گئی۔ نماز عید کے فوری بعد لوگوں نے خوشی سے ایک دوسرے کو عید کی مبارکباد دی اور گلے ملے۔بچوں میں عیدی تقسیم کی گئی جبکہ بچوں نے مساجد اور عیدگاہوں سے واپسی پر غبارے اور مختلف دوسرے کھلونوں کی خریداری کی۔نوجوانوں اور بچوں کی بڑی تعداد نے پارکوں اور چڑیا گھر پر پکنک کا اہتمام کیا۔ نئے کپڑے پہنے، شیر خورمہ کھایا اور ایک دوسرے کے گھر عید ملنے گئے۔بیشتر افراد نے صبح ہی صبح قبرستانوں کا بھی رخ کیا اور اپنے مرحوم رشتے داروں، عزیز و اقارب کی قبر پر پھول چڑھائے اور فاتحہ خوانی کی۔اس موقع پر ملک کے تمام شہروں خاص کر کراچی میں نمازوں کے اجتماعات کے اطراف پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری تعینات رہی۔ اہم مساجد اور عیدگاہوں کے داخلی دروازں پر نمازیوں کی چیکنگ کے لیے واک تھرو گیٹ لگائے گئے تھے، جبکہ تمام اہم عوامی مقامات، تفریح گاہوں اور پارکوں کے باہر بھی سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے۔ادھر ملک کے بالائی صوبے خیبر پختونخوا میں اس بار بھی صوبوں کے کئی مقامات پر ایک روز قبل یعنی جمعہ کو عید منانے کی روایت برقرار رہی۔مرکزی رویت ہلال کمیٹی نے ملک بھر میں جمعرات کو شوال کا چاند نظر نہ آنے پر ہفتے کو عید منانے کا اعلان کیا تھا۔ لیکن، پشاور کی مقامی رویت ہلال کمیٹی کی جانب سے جمعہ کو عید الفطر منانے کا اعلان کیا گیا۔ لہذا، صوبے کے کئی مقامات پر جمعہ کو جبکہ باقی ملک میں ہفتے کو عید منائی گئی۔ملتان سے سٹی رپورٹرکے مطابق ملک کے دیگر حصوں کی طرح ملتان میں بھی عید الفطر مذہبی عقیدت و احترام سے منائی گئی ۔دن کا آغاز عید کے خصوصی خطبات سے کیا گیا جن میں امت مسلمہ کے اتحاد کی ضرورت پرزور دیا گیا اور ملکی ترقی و خوشحالی کی خصوصی دعائیں کی گئیں ۔ا س موقع پر سرکاری و نجی عمارات اور تجارتی مراکز کو خوبصورتی سے سجایا گیا تھا ۔عید الفطر کے موقع پر بیشتر کھلے مقامات پر بھی نماز عید کے اجتماعات منعقد ہو ئے۔مرکزی شاہی عید گاہ میں علامہ مظہر سعید کاظمی نے نماز عید پڑھائی ۔شاہی عید گاہ ملتان کینٹ میں نماز عید کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے مفتی سعید الرحمن نے کہا کہ امت مسلمہ کے زوال کی وجہ دینی اقدار سے دوری اور نااتفاقی ہے ‘ دور حاضر کے تقاضوں کے مطابق امت مسلمہ کا اتحاد بہت ضرری ہے ۔مفتی عبدالقوی نے باغ لانگے خان(چناب کلب)‘مولانا حنیف سعیدی نے جامعہ انوار العلوم‘علامہ فاروق خان سعیدی نے جامع مسجد ممتاز آباد‘ مفتی عثمان پسروری نے جامع مسجد پیر عمر ممتاز آباد‘ قاری احمد میاں نے دربار مولانا حامد علی خان‘ مولانا کلیم اکبر صدیقی نے جامع مسجد نور گردیزی مارکیٹ‘ علامہ عنایت اللہ رحمانی نے ایم سی مڈل کڑی داؤد خان ‘قاری سعید نقشبندی نے جامع مسجد مزمل نیو ملتان‘دربار شاہ شمس تبریز کے احاطہ میں موجود مسجد میں قاضی نعیم مہروی‘ میاں سہیل احمد نے بی سی جی چوک ممتاز آباد‘قاری عبداللطیف نے مسجد جالی والی‘قاری خادم حسین نے جامع مسجد غوثیہ پیر قائم شاہ‘ قاری عبداللہ نے جامع مسجد نصیر الدین قدیر آباد‘قاری محمد ےٰسین نے جامع مسجد جلال باقری‘قاری محمد فاروق نے جامع مسجد ختم نبوت‘علامہ قاری فیض بخش رضوی نے جامع مسجد مدینہ وہاڑی چوک‘ قاری یاسر سلیم نے جامع مسجد نمرہ بھٹہ کالونی‘قاری عبدالعلیم نے مرکز سعد بن ابی وقاص چوک کچہری‘ علامہ انوار الحق مجاہد نے جامعہ انوارالاسلام ‘مخدوم محبوب عالم سبحانی نے دربار عالیہ قاضی مٹھو ‘قاری فیض احمد نے جامع مسجد ٹین سازاں التمش روڈ گجر کھڈا‘پر نماز عید الفطر کے اجتماعات سے خطاب کیا ۔‘ مولانا عتیق الرحمن‘ مولانا عبدالرزاق‘ قاری غلام شبیر سواگی‘ قاری فیض بخش رضوی‘ مولانا حافظ اللہ ڈیوایا لاشاری‘ مولانا حافظ عثمان‘ قاری غلام مصطفی محبوب ‘قاری شاہد چوہدری‘ مولوی محمد فاروق‘ قاری سیف الرحمن‘ قاری حمداللہ‘ قاری جلیل احمد‘ علامہ قاری نوید انجم نے بھی نماز عید الفطر کے اجتماعات سے خطاب کیا اور ملکی سلامتی کے لئے دعائیں کی گئیں۔