الیکشن اعلان کے بعد وزیراعظم کا دورہ گھوٹکی دھاندلی کی سازش ہے:سعید غنی

الیکشن اعلان کے بعد وزیراعظم کا دورہ گھوٹکی دھاندلی کی سازش ہے:سعید غنی
الیکشن اعلان کے بعد وزیراعظم کا دورہ گھوٹکی دھاندلی کی سازش ہے:سعید غنی

  


کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور صوبائی وزیربلدیات سندھ سعید غنی نے کہاہے کہ گھوٹکی میں الیکشن کمیشن کے الیکشن اعلان کے بعد وزیراعظم کا دورہ الیکشن کمیشن کے ضابطہ اخلاق کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے، یہ الیکشن میں دھاندلی کی سازش ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق سندھ اسمبلی کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سعید غنی کا کہنا تھا کہ گیس کے نرخوں میں143فیصد پہلے ہی اضافہ کردیا گیا اور اب مزید اس میں200فیصد اضافے کیلئے دوبارہ سی ای سی میں رکھا جارہاہے، وزیراعظم پورے ملک کے وزیراعظم ہیں، اگر وہ کراچی اور حیدرآباد کیلئے ترقیاتی کاموں کیلئے فنڈز جاری کررہے ہیں تو اچھی بات ہے، انکو سندھ کے دیگر اضلاع کیلئے بھی ایسا کرنا چاہئے۔انہوں نے کہا کہ مزید ایک نفیس شخص کو وزارت یوٹرن میں دیدی گئی، مسلم لیگ (ق) کو بھی وزارت آئندہ ایک دو روز میں دی جائیگی تاکہ بجٹ منظور کراسکیں۔انہوں نے کہا کہ  گورنر سندھ قانون، آئین اور جمہوریت سے نابلد ہیں، انکے پاس کسی قسم کے ایگزیکٹو اختیارات نہیں ہیں،سندھ حکومت کی کارکردگی سے خوفزدہ وفاقی حکومت ہماری لیڈر شپ اور بیوروکریسی پر نیب کے ذریعے دباؤ ڈال کر ہراساں کرنا چاہتی ہیں۔صوبائی  وزیر بلدیات نے کہا کہ وزیراعظم گھوٹکی کا دورہ کررہے ہیں، اس وقت الیکشن کمیشن نے قومی اسمبلی کے ضمنی انتخابات کے شیڈول کا اعلان کردیا ہے، الیکشن کمیشن کے قواعد کے تحت جہاں پر الیکشن کا اعلان ہوجائے وہاں وزیراعظم، وزرا، وزیر یا سینیٹر نہیں جاسکتا، اس سلسلے میں ہم نے الیکشن کمیشن کو خط لکھ دیاہے، موجودہ حکومت نے 11 ماہ کے دوران مہنگائی کی شرح میں جس قدر اضافہ کیا ہے اس کی ملکی تاریخ میں کوئی مثال نہیں ملتی۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی