سعودی عرب کا سیاحتی شعبہ بحال کرنے کا اعلان

سعودی عرب کا سیاحتی شعبہ بحال کرنے کا اعلان
سعودی عرب کا سیاحتی شعبہ بحال کرنے کا اعلان

  

ریاض(ویب ڈیسک) سعودی وزیر سیاحت احمد الخطیب نے اعلان کیا ہے کہ 21 جون سے ملک بھر میں سیاحت کا شعبہ مکمل طور پر بحال کر دیا جائے گا۔ شعبہ سیاحت کو کھولنے کا فیصلہ عرب وزراءخارجہ کی ہنگامی اجلاس میں کیا گیا۔

اس موقع پر سعودی وزیر سیاحت احمد الخطیب نے کہا کہ سیاحت کا شعبہ ملک بھر میں مکمل طور پر بحال کر دیا جائے گا مگر مکہ مکرمہ میں سیاحتی شعبے پرپابندی ہوگی۔انہوں نے کہا کہ اس شعبے پر اتنی طویل پابندی کے باعث شعبہ سیاحت سے منسلک افراد کی ملازمتوں کو خطرات لاحق ہوگئے تھے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب میں سیاحت ایسا شعبہ ہے جس کے کارکنان کی تعداد کل ملازمتوں کا بارہ فی صد ہے اورعرب ممالک کی 13 فیصد قومی مجموعی پیداوار بھی سیاحت سے حاصل ہوتی ہے۔عالمی وبا کورونا وائرس کے باعث دنیا بھر کے بیشتر ممالک نے لاک ڈاؤن نافذ کیے رکھا جس کی وجہ سے بڑے پیمانے پر کاروبار اور دیگر سرگرمیاں معطل رہیں۔

خیال رہے کہ اس وقت سعودی عرب میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 41 ہزار سے زائد ہے جب کہ اس موذی مرض کے سبب 1 ہزار 91 افراد جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔

چند روز قبل سعودی عرب نے اندرون ملک پروازوں کے لیے چند ہوائی اڈے کھولے تھے اور باقی تمام ایئر پورٹس 21 جون سے کھولنے کا اعلان کیا تھا۔سعودی ایوی ایشن کے مطابق بشا، طائف، ینبع، حفرالباطن اور شروة کے لیے بھی پروازیں بحال ہو گئی تھیں۔ قبل ازیں 31 مئی سے سعودی عرب کے 11 داخلی ہوائی اڈوں کو کھولا گیا تھا۔

ایوی ایشن حکام کا کہنا تھا کہ سفر کے دوران کورونا وائرس سے متعلق تمام احتیاطی تدابیر پر عمل کیا جائے گا۔دوران سفر فیس ماسک، سماجی فاصلہ اور دیگر احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد لازمی ہوگا۔ایئرپورٹ پر مسافروں کو الوداع کہنے یا استقبال کرنے والوں کو آنے کی اجازت نہیں ہوگی۔ فلائٹ سے قبل مسافروں کو خصوصی ہدایات نامے میں درج ہدایات پر عمل کرنا لازمی ہوگا تاکہ احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد کو یقینی بنایا جا سکے۔

مزید :

عرب دنیا -